”شعیب اختر محتاط رہیں کیونکہ۔۔۔“ پاکستان بار کونسل نے سابق سپیڈ سٹار کو ’خبردار‘ کر دیا، بڑی مشکل میں پھنس گئے

”شعیب اختر محتاط رہیں کیونکہ۔۔۔“ پاکستان بار کونسل نے سابق سپیڈ سٹار کو ...
”شعیب اختر محتاط رہیں کیونکہ۔۔۔“ پاکستان بار کونسل نے سابق سپیڈ سٹار کو ’خبردار‘ کر دیا، بڑی مشکل میں پھنس گئے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان بار کونسل نے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے قانونی مشیر تفضل رضوی کے حوالے سے سابق فاسٹ باﺅلر شعیب اختر کے بیان پر شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے انہیں محتاط رہنے کا کہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان بار کونسل کے وائس چیئرمین عابد ساقی کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پی سی بی کے قانونی مشیر تفضل رضوی پاکستان بار کے رکن ہیں، شعیب اختر کو ایسا بیان نہیں دینا چاہیے تھا۔ انہوں نے کہا کہ وکیل اپنے کلائنٹ کی ہدایات کے مطابق کیس کو لے کر چلتا ہے، بار کونسل ایسے مضحکہ خیز بیانات کی اجازت نہیں دے گی، شعیب اختر محتاط رہیں۔

خیال رہے کہ سابق فاسٹ باﺅلر شعیب اختر کی جانب سے عمر اکمل پر پابندی کے فیصلے اور پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے قانونی مشیر تفضل رضوی کے حوالے سے بیان کا پی سی بی نے بھی نوٹس لیا اور کہا کہ شعیب اختر نے پی سی بی کے لیگل ڈیپارٹمنٹ اور قانونی مشیر کے خلاف جس طرح کے الفاظ کا انتخاب کیا اس پر مایوسی ہوئی ہے۔

واضح رہے کہ 27 اپریل کو پی سی بی ڈسپلنری پینل کے چیئرمین جسٹس (ر) فضل میراں چوہان نے عمر اکمل پر اینٹی کرپشن کوڈ کی خلاف ورزی پر 3 سال کیلئے مکمل پابندی عائد کردی تھی۔اس کے بعد سابق ٹیسٹ کرکٹر اور سپیڈ سٹار شعیب اختر مڈل آرڈر بیٹسمین عمر اکمل کے حق میں سامنے آ گئے تھے اور انہوں نے عمر اکمل پر 3 سالہ پابندی کی مخالفت کی تھی۔

اپنے بیان میں شعیب اختر نے کہا تھا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے دراصل عمر اکمل پر غصہ نکالا ہے، تین سال کی پابندی بہت سخت سزا ہے۔شعیب اختر نے پی سی بی کے قانونی مشیر تفضل رضوی پر بھی تنقید کی تھی اور کہا تھا کہ تفضل رضوی تمام کھلاڑیوں کے کیسز الجھاتے ہیں، وہ ماضی میں مجھ سے بھی کیس ہار چکے ہیں۔

مزید :

کھیل -