”میں عمر اکمل کو نصیحت کرنا چاہتا ہوں کہ۔۔۔“ کامران اکمل نے اپنے بھائی سے اپیل نما نصیحت کر دی، جان کر آپ بھی بے اختیار کہہ اٹھیں گے ”لگتا نہیں ایسا ہو گا“

”میں عمر اکمل کو نصیحت کرنا چاہتا ہوں کہ۔۔۔“ کامران اکمل نے اپنے بھائی سے ...
”میں عمر اکمل کو نصیحت کرنا چاہتا ہوں کہ۔۔۔“ کامران اکمل نے اپنے بھائی سے اپیل نما نصیحت کر دی، جان کر آپ بھی بے اختیار کہہ اٹھیں گے ”لگتا نہیں ایسا ہو گا“

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے وکٹ کیپر بلے باز کامران اکمل میچ فکسنگ میں تین سالہ پابندی کے بعد تنازعات اور سکینڈلز سے بھرپور کیریئر پر عمراکمل کو نصیحتیں کرنے لگے ہیں اور انہیں بابراعظم اور ویرات کوہلی کے مثالی طرز عمل سے سیکھنے کا مشورہ دیدیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق کامران اکمل نے کہا کہ عمر اکمل کو چاہئے وہ ویرات کوہلی اور پاکستان کے ٹی 20 ٹیم کے کپتان بابر اعظم کے مثالی طرز عمل کا مشاہدہ کریں اور سیکھیں۔عمر کے لئے میرا مشورہ یہ ہے کہ اسے سیکھنا ہے، اگر اس نے غلطی کی ہے تو اسے دوسروں سے بھی سیکھنا چاہیے کیونکہ وہ اب بھی جوان ہے، زندگی میں بہت سے خلفشار ہیں۔

کامران اکمل نے کہا کہ عمر اکمل کو ویرات کوہلی سے سیکھنا چاہئے، ابتدائی دنوں میں کوہلی انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) میں مختلف تھے پھر انہوں نے اپنا رویہ اور انداز تبدیل کیا اور دیکھو وہ کیسے دنیا کے نمبر ون بلے باز بن گئے ہیں۔

وکٹ کیپر بیٹسمین نے کہا کہ پھر ہمارا اپنا بابر اعظم ہے جو اب دنیا میں سرفہرست تین پلیئرز میں شامل ہے پھر دھونی جیسی اور بھی مثالیں موجود ہیں، دیکھیں کہ انہوں نے اپنی ٹیم کی قیادت کس طرح کی ہے ہمیں ان سے مشاہدہ کرنا اور سیکھنا چاہیے کیونکہ اس سے ہمارے ملک کو فائدہ ہو گا۔

کامران اکمل کا خیال ہے کہ ان کے بھائی اور سخت ہٹ مار کرنے والے بلے باز عمر اکمل ہندوستانی کپتان ویرات کوہلی کی طرح اپنے کیریئر کا آغاز کرنے کے باوجود اپنی صلاحیتوں کے مطابق زندگی گذارنے میں ناکام رہے ہیں۔

مزید :

کھیل -