”اگر حمل کے دوران 50 سگریٹ روز کے پیتی تو شائد تمہارا بچہ بچ جاتا“

”اگر حمل کے دوران 50 سگریٹ روز کے پیتی تو شائد تمہارا بچہ بچ جاتا“
”اگر حمل کے دوران 50 سگریٹ روز کے پیتی تو شائد تمہارا بچہ بچ جاتا“

  


لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) ہمارے عطائی ڈاکٹر مریضوں کو ایسے مشورے دیں تو بات سمجھ بھی آتی ہے لیکن برطانیہ کے کوالیفائیڈ ڈاکٹرز بھی مریضوں کو عجیب و غریب نوعیت کے مشورے دیتے ہیں۔ ابھی کل ہی ہم نے آپ کو برطانیہ کے ایک ڈاکٹر کی حرکت سے آگاہ کیا تھا جس نے خارش کی ایک مریضہ کو بلیچ سے نہانے کا مشورہ دیا اور اس خاتون کا سارا جسم جھلس گیا۔ آج ایک نئی خبر آئی ہے کہ ایک برطانوی خاتون کیٹ لینفورڈکے ہاں ہسپتال میں بچہ پیدا ہوا۔ بچہ خاصا صحت مند تھا اس لیے زچگی میں کافی دشواری ہوئی اور ڈاکٹروں کی کوشش کے دوران بچے کے سرکی ہڈی فریکچر ہو گئی جس سے بچہ بمشکل 48گھنٹے زندہ رہا اور انتقال کر گیا۔

ہسپتال کی ڈاکٹر شیرون اوٹس نے بچے کی ہلاکت کی ذمہ داری لینے کی بجائے ماں کو ایک انوکھا مشورہ دے دیا۔ اس نے کیٹ کو کہا کہ وہ روزانہ 50سگریٹ پیا کرے تاکہ اس کے ہاں آئندہ چھوٹے سائز کا بچہ ہو، تاکہ زچگی آسانی سے ہو سکے۔دوسری طرف بچے کے والدین نے ڈاکٹرشیرون اوٹس کو بچے کی ہلاکت کا ذمہ دار قرار دیا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...