1990ء کی دہائی کے بحران کاکوئی خدشتہ نہیں، ڈی بی ایس

1990ء کی دہائی کے بحران کاکوئی خدشتہ نہیں، ڈی بی ایس

سنگاپور (اے پی پی) جنوب مشرقی ایشیاء کے سب سے بڑے بینک ڈی بی ایس کے چیف ایگزیکٹو آفیسر نے کہا ہے کہ چین کی معیشت سست روی کا شکار ہے تاہم 1990ء کی دہائی کے بحران کاکوئی خدشتہ نہیں ہے۔ گزشتہ روز سنگا پور میں نامہ نگاروں سے گفتگو کرتے ہوئے ڈی بی ایس کے چیف ایگزیکٹو نے چین اور دیگر بین الاقوامی سٹاک مارکیٹوں کی صورتحال پر تفصیل سے روشنی ڈالی۔ ان کا کہنا تھا کہ 1990ء کی دہائی کے آخری تین چار سالوں میں جنوب مشرقی ایشیاء کے ممالک کی معیشت جس بحران کا شکار ہوگئی تھی۔ اسی نوعیت کے بحران کا اب کوئی خطرہ نہیں ہے کیونکہ اس وقت ان ممالک کی معیشت مضبوط بنیادوں پر استوار ہے۔ انہوں نے کہا کہ چین کی معیشت سست روی کا شکار ضرور ہوگئی ہے تاہم اس کا مطلب یہ نہیں کہ چینی معیشت گر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ سست روی شعبہ جاتی ہے اس سے بعض شعبے متاثر ہوں گے اور بعض پر اثرات مرتب نہیں ہوں گے۔ موجودہ صورتحال سے بھی صنعتی بالخصوص تعمیرات کا شعبہ متاثر ہوا جبکہ اس کے برعکس چینی معیشت میں خدمات کا شعبہ سب سے بڑا ہے اور اس شعبے میں وسعت دیکھنے میں آرہی ہے۔

مزید : کامرس


loading...