ملک میں کرپشن ناسور کی صورت اختیار کرچکی ہے،وسیم اختر

ملک میں کرپشن ناسور کی صورت اختیار کرچکی ہے،وسیم اختر

لاہور(پ ر)پارلیمانی لیڈرصوبائی اسمبلی وامیر جماعت اسلامی پنجاب ڈاکٹر سید وسیم اختراور قائمقام سیکرٹری جنرل راؤظفراقبال نے کہاہے کہ ملک میں کرپشن ناسور کی صورت اختیار کرچکی ہے اوپرسے لے کر نیچے تک کرپٹ مافیا سرگرم ہے جبکہ نیب کی کارروائیوں سے20 کروڑپاکستانی عوام ابھی تک غیر مطمئن ہیں ۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ کرپٹ عناصرخواہ وہ کسی بھی سیاسی جماعت سے تعلق کیوں نہ رکھتے ہوں ان کے خلاف بلاتفریق کاروائی ہونی چاہئے ۔

۔

۔

کسی ایک جماعت یاگروہ کے خلاف کاروائیوں سے معاملہ غیر شفاف اور غیرجانبدار ہوجائے گاپاکستان کا آئین کسی اثرورسوخ رکھنے والے ملزم کے ساتھ مراعاتی سلوک کی اجازت نہیں دیتازندہ معاشروں میں قانون کی حکمرانی اور عدلیہ کے احترام کی عظیم روایات کوبرقرار رکھاجاتا ہے۔انہوں نے کہاکہ کرپشن کیس میں وفاقی اینٹی کرپشن کورٹ کے جج محمد عظیم کی جانب سے سابق وزیراعظم یوسف رضاگیلانی اور مخدوم امین فہیم کو10ستمبر تک پیش کرنے کے حکم پر واویلا نہیں مچانا چاہئے کرپٹ ملزمان کوبچانے کے لئے سوچی سمجھی سازش کی جارہی ہے اور کرپشن کیسز کوسیاسی بنانے کی کوششیں کی جارہی ہیں جن کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔احتساب کے بغیر جمہوریت کے اثرات عوام تک نہیں پہنچ سکتے ملک میں عوام کی محرومیوں کی اصل وجہ وسائل کی کمی نہیں بلکہ کرپشن ہے جوکہ مقتدرقوتیں دھڑلے سے کرتی ہیں۔جماعت اسلامی پنجاب کے رہنما ؤ ں نے مزیدکہاکہ قانون کی عملداری کویقینی بنانے کیلئے تمام سیاسی جماعتوں کو چاہئے کہ وہ اپنی صفوں سے کرپٹ افراد کو فی الفور باہر نکالیں خواہ وہ کسی بھی عہدے پر کیوں نہ ہوں ایک اندازے کے مطابق پاکستان میں روزانہ12سو ارب روپے کی کرپشن ہورہی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...