خطے میں امن کی خواہش کو پاکستان کی کمزوری نہ سمجھا جائے،میاں منظور وٹو

خطے میں امن کی خواہش کو پاکستان کی کمزوری نہ سمجھا جائے،میاں منظور وٹو

لاہور( نمائندہ خصوصی )پیپلز پارٹی سنٹرل پنجاب کے صدر میاں منظور احمد وٹونے بھارت کی طرف سے ورکنگ باؤنڈری پر بلااشتعال گولہ باری کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی جارحیت سے متعدد افراد شہید اور تقریباً 100 سے زائد زخمی ہوئے انہوں نے سوگوار خاندانوں سے پارٹی کی طرف سے دلی تعزیت کی اور کہا کہ ہندوستان کی اِن بزدلانہ کارروائیوں سے قوم کے حوصلے جارحیت کو شکست دینے کے لیے مزیدمضبوط ہونگے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ورکنگ باؤنڈری اور لائن آف کنٹرول پر ہندوستان کی خلاف ورزیاں ایک مقصد کے تحت کی جارہی ہیں تا کہ پاکستانی قوم اور فوج کی توجہ دہشتگردی اور انتہاء پسندی سے ہٹائی جا سکے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہندوستان کو ’’ضرب عضب‘‘ آپریشن کی دہشتگردوں کے خلاف کامیابیاں ہضم نہیں ہو رہی ہیں اور وہ اس طرح کی کارروائیاں بوکھلاہٹ اور انتہائی مایوسی کے عالم میں کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح ہندوستان دہشتگردوں کی حمایت کر کے اس خطے کے امن اور سلامتی کے خلاف ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت کام لے رہا ہے لیکن اس کو ہرگز پاکستان کی کمزوری نہ سمجھا جائے۔ انہوں نے متنبہ کیا کہ اگر اس تاثر کے تحت پاکستان کے خلاف جارحیت کی گئی تو دشمن کو ناقابل برداشت قیمت ادا کرنا پڑے گی۔ انہوں نے یاددلایا کہ شہید ذوالفقار علی بھٹو اور شہید محترمہ بینظیر بھٹو نے پاکستان کے دفاع کو ناقابل تسخیر بنانے کے لیے فیصلہ کن کردار ادا کیا تھا اور آج دشمن کا کوئی علاقہ بھی پاکستان کے ڈلیوری سسٹم کے ہدف سے باہر نہیں۔ انہوں نے واضح کیا کہ ہندوستان اور پاکستان دونوں کے پاس اچھے ہمسایوں کی طرح رہنے کے علاوہ اور کوئی چارہ کار نہیں ہے کیونکہ ایٹمی جنگ کی صورت میں دونوں ملک ایک تابکاری ڈھیر میں بدل جائیں گے جہاں زندگی عذاب ہو گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ دونوں ممالک کو لوگوں کے ازلی دشمن غربت، جہالت، بیماری اور شہری سہولتوں کی فراہمی پر اپنے مالی وسائل وقف کرنے چاہئیں۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان کی چوہدراہٹ کی ازلی خواہش اس کو آخر کار لے ڈوبے گی۔

مزید : صفحہ آخر


loading...