زین قتل کیس ، مدعی کے بیانات کی ویڈیوکے فرانزک ٹیسٹ کا حکم

زین قتل کیس ، مدعی کے بیانات کی ویڈیوکے فرانزک ٹیسٹ کا حکم

لاہور(نامہ نگار)انسداد دہشت گردی کی عدالت نے زین قتل کیس کی سماعت 2 ستمبر تک ملتوی کرتے ہوئے مدعی کے میڈیا کو دئیے گئے بیانات کی ویڈیو فرانزک معائنے کے لئے لیبارٹری بھجوانے کا حکم دے دیا۔ انسداددہشت گردی کی عدالت نمبر ایک کے جج محمد قاسم نے زین قتل کیس کی سماعت کی ، مصطفیٰ کانجو سمیت 5ملزمان کو عدالت میں پیش کیا گیا۔عدالت نے پراسیکیوشن کی جانب سے دائر درخواست منظور کرتے ہوئے مدعی سہیل افضل کے میڈیا بیانات کی ویڈیو فرانزک معائنے کے لئے لیبارٹری بھیجوانے کا حکم دے دیاہے ،گزشتہ تاریخ سماعت پر مدعی سہیل افضل نے اپنے تحریری بیان میں مصطفی کانجو سمیت کسی ملزم کا نام نہیں لیا جب کہ دیگر ملزمان کو بھی پہچاننے سے انکار کر دیا تھاجس پر پرایسکیوشن کی جانب سے درخواست دائر کرتے ہوئے مدعی کے میڈیا کو دئیے گئے ابتدائی بیانات کا ریکارڈ طلب کرنے اور ان کے معائنے کی استدعا کی تھی۔ عدالت نے آئندہ سماعت پر استغاثہ کے دیگر گواہان کو بھی طلب کر لیا ہے۔سابق وفاقی وزیرصدیق کانجو کے بیٹے مصطفیٰ کانجو پرلاہور کے علاقے کیولری گراؤنڈ میں پندرہ سالہ لڑکے زین کوفائرنگ کرکے قتل کرنے کاالزام ہے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...