چار سال کی محنت کے بعدوصول ہونیوالی ڈگری پر لکھی عبارت نے طالبعلم کو حیرت میں مبتلا کر دیا

چار سال کی محنت کے بعدوصول ہونیوالی ڈگری پر لکھی عبارت نے طالبعلم کو حیرت میں ...
چار سال کی محنت کے بعدوصول ہونیوالی ڈگری پر لکھی عبارت نے طالبعلم کو حیرت میں مبتلا کر دیا

  


آئرلینڈ(مانیٹرنگ ڈیسک)زمانہ طالبعلمی میں یونیورسٹی کی کڑی محنت اور پڑھائی کے بعد ڈگری کے حصول کے دن کا سب ہی بے صبری سے انتظار کرتے ہیں۔ تقریب تقسیم اسناد کے دوران سند حاصل کرنے والے طالبعلموں کے چہروں پر خوشی بخوبی دیکھی جا سکتی ہے۔ لیکن ایسا کیا ہوا کہ اونگھس ڈونووان نے چار سال تک یونیورسٹی آف لیمیرک میں سخت محنت کی جب ڈگری حاصل کرنے کا دن آیا تو تقریب تقسیم اسناد میں اپنی ڈگری وصول کرنے کے بعد جب اونگھس ڈونووان سٹیج سے نیچے اترا اور اپنی ڈگری کا معائنہ کیا تو خوش ہونے کی بجائے حیرت میں مبتلا ہو گیا۔اسے یقین ہی نہ آیا کہ ڈگری پر یہ عبارت بھی رقم ہو سکتی ہے، ڈگری پر لکھا ہوا تھا کہ آپ کو یہ غلطی سے وصول ہوسکتی ہے، برائے مہربانی تقریب کے بعد سٹوڈنٹ اکیڈمک ایڈمنسٹریشنز آفس میں کال کر کے ہدایات پر عمل کرتے ہوئے ڈگری حاصل کریں،تکلیف کےلئے معذرت خواہ ہیں۔

اونگھس نے فرضی ڈگری وصول کر کے اس کی تصاویر اپنے فیس بک اکاؤنٹ پر لگائی اور لکھا کہ چار سال کی سخت محنت کے بعد مجھے یہ دیا گیا ہے۔اونگھس کا کہنا ہے اس غلطی کا ازالہ جلد ہی کر دیا گیا۔ ایک چھوٹی سی لائن میں لگنے کے بعد اسے اصل ڈگری تھما دی گئی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...