چین پاکستان میں توانائی کے 14منصوبوں پر کام کر رہا ہے،احسن اقبال

چین پاکستان میں توانائی کے 14منصوبوں پر کام کر رہا ہے،احسن اقبال

  

اسلام آباد(رپورٹنگ ٹیم)چین پاکستان میں 10ہزار 400میگاواٹ کے توانائی کے 14منصوبوں پر کام کر رہا ہے جو دسمبر2018ء تک مکمل ہو جائیں گے ا س امر کا انکشاف پاکستان میں چین کے سفیر سن ویڈانگ اور وفاقی وزیر پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ احسن اقبال نے پاکستانیوں سے بھی گفتگو کرتے ہوئے کیا پاکستان کے سوال کے جواب میں ان دونوں حضرات کا کہنا تھا کہ اس وقت پاکستان بجلی کا شارٹ فال 5سے 7ہزار میگاواٹ کا ہے جو چائینہ کی طرف سے شروع کئے گئے بجلی کے 14منصوبوں کی تکمیل کے بعد ختم ہو جائے گا ۔وفاقی وزیر احسن اقبال نے بتایا کہ ہمارے چینی انجینئر اور سرمایہ کار ان منصوبوں پر تیزی سے عمل کر رہے ہیں اور یہ 14منصوبے اپنی مقررہ مدت میں 2018ء تک مکمل ہو جائیں گے جس کے بعد اہل پاکستان کو بجلی کی لوڈشیڈنگ سے چھٹکارا ہو جائے گا انہوں نے کہا کہ جہا تک سی پیک کا تعلق ہے تو یہ پاکستانیوں کے لئے چائینہ اور موجودہ حکومت کا ایک انمول تحفہ ہے چینی سرمایہ کاروں نے پاکستان میں توانائی کے علاوہ بھی جو منصوبے شروع کئے ہیں ان میں سے کئی ایک پایہ تکمیل تک پہنچنے والے ہیں ویژن 2025کے تحت ہم پاکستان کو ایک مضبوط اور مستحکم معیشت والا ملک بنا دیں گے جو کسی بھی میدان میں تمام ترقی یافتہ ممالک کے برابر کھڑا ہو گا ۔

مزید :

علاقائی -