ماتحت عدالتوں کے 22 ججوں کو پروفارما پروموشن اورپانچ سول ججز کلاس دوم کو کلاس ون کے اختیار دینے کی منظوری

ماتحت عدالتوں کے 22 ججوں کو پروفارما پروموشن اورپانچ سول ججز کلاس دوم کو کلاس ...

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی)چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ سید منصور علی شاہ کی سربراہی میں عدالت عالیہ کی انتظامی کمیٹی نے ماتحت عدالتوں کے 22 ججوں کو پروفارما پروموشن اورپانچ سول ججز کلاس دوم کو کلاس ون کے اختیار دینے کی منظوری دے دی ہے۔ نوٹیفیکیشن کے مطابق جن ججوں کو پروفارما پرموشن دی گئی ہے ان میں ایڈیشنل سیشن جج (ریٹائرڈ) چودھری عمر حیات، سیشن جج محمد اقبال خان، سیشن جج خضر حیات سیال، سیشن جج محمد تنویر حیات، ایڈیشنل سیشن جج اعجاز احمد، سینئر سول جج عبد الجبار، سینئر سول جج محمد اختر بھنگو، سینئر سول جج نبیلہ جعفری سید، سینئر سول جج محمد اسلم پنجوتہ، سینئر سول جج حید ر علی خان، سینئر سول جج انوار اللہ، سینئر سول جج محمد وسیم انجم، سینئر سول جج محمد واجد منہاس، سینئر سول جج امجد علی، سینئر سول جج اکرام الحق چودھری، سینئر سول جج ساجدہ احمد، سینئر سول جج محمد ابو بکر صدیق بھٹی، سینئر سول جج ماجد کریم فاروق، سول جج (ریٹارئرڈ) محمد نوید ہاشمی، سیشن جج ضیاء القمر، ایڈیشنل سیشن جج اسد اللہ سراج اور سینئر سول جج شفیق احمد شفیع شامل ہیں۔ کمیٹی نے سول جج محمد شہباز، تجمل حسین ، محمد اکرام، شوکت حیات اور اختر علی کو سول جج کلاس ون کے اختیارات دینے کی منظوری بھی دی ہے جبکہ ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج(ریٹائرڈ) محمد امجد پرویز اور سول جج طارق محمود کے خلاف جاری محکمانہ کارروائی روکنے کے احکامات بھی جاری کئے گئے ہیں ۔

مزید :

صفحہ آخر -