برطانوی وفد کا پنجاب سرمایہ کاری بورڈ کے دفتر کا دورہ

برطانوی وفد کا پنجاب سرمایہ کاری بورڈ کے دفتر کا دورہ

لاہور (کامرس رپورٹر)پنجاب میں سرمایہ کاری کیلئے بڑھتے ہوئے مواقع کا جائزہ لینے کیلئے برطانیہ کے ادارہ برائے بین الاقوامی ترقی کے ایک اعلیٰ سطحی وفد نے پنجاب بورڈ برائے سرمایہ کاری و تجارت کا دورہ کیا۔ برطانوی وفد کی سربراہی منسٹریل سٹریٹیجی ڈائریکٹوریٹ کے بین اینسلی کر رہے تھے جبکہ ان کے ساتھ مشیر برائے اکنامک ہورائزن پالیسی اینڈی روبی اور ٹریڈ پالیسی ونگ کے میکس پیٹروکوفسکی وفد میں شامل تھے۔ پنجاب بورڈ برائے سرمایہ کاری و تجارت کے چیف ایگزیکٹو آفیسر جہانزیب برانہ نے ڈیفڈ برطانیہ کے وفد کو پنجاب آمد پر خوش آمدید کہا اور انہیں پنچاب میں مختلف شعبہ جات میں موجود سرمایہ کاری کے مواقع سے روشناس کروایا۔ سی ای او جہانزیب برانہ نے برطانوی وفد کو بتایا کہ پنجاب میں زرعی، تعلیم، انفارمیشن ٹیکنالوجی، مینوفیکچرنگ، خدمات، توانائی، سیاحت، انڈسٹریل اسٹیٹس، صحت اور سپیشل اکنامک زونز کے شعبوں میں بے پناہ مواقع موجود ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ بین الاقوامی کمپنیاں پنجاب میں موجود ’’گرین فیلڈ ‘‘ سرمایہ کاری مواقع سے بھرپور استفادہ کر سکتے ہیں۔

اس موقع پر برطانوی وفد کے سربراہ بین اینسلی نے گفتگو میں حصہ لیتے ہوئے کہا کہ پاکستان اور برطانیہ باہمی سرمایہ کاری اور تجارت کے شعبوں میں تعاون کو نئی بلندیوں تک پہنچا سکتے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ باہمی معاشی تعاون دونوں ممالک کے لئے سود مند ثابت ہو گا اور اس کے لئے ہمیں تواتر کے ساتھ تجارتی وفود کا تبادلہ کرنا ہو گا ، اس سے نہ صرف معاشی استحکام پیدا ہو گا بلکہ دونوں ممالک کے عوام کی صلاحتیوں اور استعداد کو بڑھانے میں مدد ملے گی ۔ برطانوی وفد نے پنجاب بورڈ برائے سرمایہ کاری و تجارت کے کام کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ بلاشبہ پاکستان اور برطانیہ میں معاشی تعاون میں اضافے کے واضح اور بہترین امکانات موجود ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک باہمی تعاون کے ذریعے معاشی استحکام کی نئی جہتیں تلاش کر سکتے ہیں۔

مزید : کامرس