’’بیسٹ کارپوریٹ اینڈ سسٹینبلٹی رپورٹ ایوارڈکی تقریب

’’بیسٹ کارپوریٹ اینڈ سسٹینبلٹی رپورٹ ایوارڈکی تقریب

کراچی(اسٹاف رپورٹر) انسٹیٹیوٹ آف چارٹرڈ اکاؤنٹنٹس آف پاکستان (ICAP)اور انسٹیٹیوٹ آف کاسٹ اینڈ مینجمنٹ آف پاکستان (ICMAP)کی جانب سے مورخہ 25 اگست2017 ء کو کراچی کے مقامی ہوٹل میں پاکستان کے اندر کاروباری دنیا کی سب سے بڑی ’’بیسٹ کارپوریٹ اینڈ سسٹینبلٹی رپورٹ 2016 ء کی ایوارڈ تقریب کا انعقاد کیا گیا ۔تقریب کا آغاز تلاوت قرآن پاک اور قومی ترانے سے کیاگیا۔ اس موقع پر یعقوب ستار چیئر مین جوائنٹ ایویلیو ایشن کمیٹی نے گزشتہ کئی سالوں سے کارپوریٹ رپورٹنگ میں گراں قدر خدمات فراہم کرنیوالی تمام معززشخصیات اور قابل قدر مہمانانِ گرامی کو خوش آمدید کہا۔انہوں نے تمام شمولیت کنندگان کی جہد مسلسل پر انہیں مبارکباد بھی پیش کی ۔انہوں نے کہا کہ یہ سالانہ رپورٹ کمپنی کے مربوط ابلاغ پر مشتمل ایک اہم دستاویز ہے جس سے کمپنی کے نقط نظر، اقدار ، کمپنی کے فلسفہ، سابقہ کارکردگی ، درخشاں مستقبل کی وضاحت ،ترقی کے امکانات کے علاوہ سرمایہ کاروں کو کمپنی ہٰذا میں سرمایہ کاری کے فوائدبارے ترغیب فراہم کرے گی ۔انہوں نے اس موقع پر مزیدبتایا کہ ایوارڈز کے انعقاد کا مقصد اپنے سٹیک ہولڈرز کو بروقت ، معلوماتی ، حقائق پر مبنی اور آسان فہم سالانہ رپورٹ فراہم کرنا ہے تاکہ وہ فنانشل اور دیگر معاملات کے متعلق معلومات با آسانی حاصل کر سکیں ۔انہوں نے کہا کہ عوامی آگاہی بڑھنے سے انہیں مؤثر ابلاغ اور رپورٹنگ کی اہمیت کا اندازہ ہوگا جس کا براہ راست فائدہ سرمایہ کاروں کو ملے گا ۔ ندیم یوسف عادل صدر آئی سی اے پی نے اپنی تقریر میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ ہم معزز گورنر سندھ محمد زبیرکی اس تقریب میں شرکت پر ان کے تہہ دل سے مشکور ہیں ۔انہوں نے مہمانِ خصوصی طفر اقبال سوبانی اور اسد علی شاہ سابقہ صدر آئی سی اے پی ، کاشف متین انصاری سابقہ صدر آئی سی ایم اے پی ، اور محمد جنیف اجاری سابق نائب صدر آئی سی ایم اے پی اور دیگر معزز مہمانوں کا تقریب میں شرکت پر شکریہ ادا کیا ۔آئی سی اے پی کے صدر نے اس مقابلہ میں شرکت پر تمام کمپنیوں کا بھی شکریہ ادا کیا۔انہوں نے کہا کہ آئی سی اے پی پاکستان کے کارپوریٹ سیکٹر میں شفافیت اور احتساب کے عمل کو فعال بنانے میں کوشاں ہے ۔ انہوں نے وضاحت کی کہ پیشہ وارانہ اخلاقیات اور نظم و ضبط پر عمل پیرا ہوتے ہوئے پاکستان کے اندر اس شعبہ میں دن دوگنی اور رات چوگنی ترقی کی جا سکتی ہے ۔انہوں نے بتایاکہ آئی سی اے پی نے ایس اے ایف اے ، سی اے پی اے اور آی ایف اے سی جیسی تنظیمیں بنا کر اس پیشہ کو قومی ، مقامی اور بین الاقوامی سطح پر دوام بخشا ہے اور اس گراں قدر شراکت سے کارپوریٹ گورننس میں شفافیت اور اس کے معیار میں اضافہ ہوا ہے۔انہوں نے مشترکہ تجزیاتی کمیٹی اور انتظامیہ کو اس ایوارڈ کی تقریب کے انعقاد پرمباکباد پیش کی ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...