عبدالباسط سمجھتے ہیں کہ میری وجہ سے سیکرٹری خارجہ نہیں بن پائے، ریٹائرمنٹ کے بعد بھی ان کی جلن ختم نہیں ہور ہی: اعزاز چوہدری

عبدالباسط سمجھتے ہیں کہ میری وجہ سے سیکرٹری خارجہ نہیں بن پائے، ریٹائرمنٹ کے ...
عبدالباسط سمجھتے ہیں کہ میری وجہ سے سیکرٹری خارجہ نہیں بن پائے، ریٹائرمنٹ کے بعد بھی ان کی جلن ختم نہیں ہور ہی: اعزاز چوہدری

واشنگٹن (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کے امریکہ میں تعینات سفیر اعزاز چوہدری کا کہنا ہے کہ عبدالباسط اپنے سیکرٹری خارجہ نہ بننے کی وجہ انہیں سمجھتے ہیں اور ان کی ریٹائرمنٹ کے بعد بھی جلن کم نہیں ہورہی۔

پاکستان کے بھارت میں تعینات سابق ہائی کمشنر عبدالباسط کے خط پر اپنے رد عمل میں اعزاز چوہدری کاکہنا تھا کہ عبدالباسط نے مجھے ایک خط لکھا جو اب سوشل میڈیا پر گردش کر رہا ہے، یہ خط بہت ہی ناشائستہ تھا اس لیے اس پر جواب دینا ضروری نہیں تھا،ان کا یہ سوچنا غلط ہے کہ وہ میری وجہ سے سیکرٹری خارجہ نہیں بن پائے، ریٹائر ہونے کے باوجود ان کی جلن ختم نہیں ہوئی، میں نے اس خط پر چاروں قل اور بالخصوص سورة الفلق پڑھ دی تھی اور اسے نظر انداز کردیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ میں نے اپنے ملک کی بھرپور صلاحیتوں کے ساتھ خدمت کی ہے، ہم میں سے عبدالباسط جیسے بعض لوگ یہ سمجھنے میں ناکام ہوگئے کہ زندگی انسانی کوششوں اور قسمت کے تال میل کا نام ہے۔ زندگی ہمیں جو بھی دیتی ہے اسے قبول کرنا چاہیے اور خدا کا شکر گزار ہونا چاہیے،غیر ضروری چیخ وپکار اور دوسروں پر کیچڑ اچھالنے سے کچھ حاصل نہیں ہوتا۔

یہ بھی پڑھیں: عبدالباسط نے اعزاز چوہدری کو امریکہ میں بدترین سفیر قرار دے دیا

اعزازچوہدری کا مزید کہنا تھامتعدد ساتھیوں نے عبدالباسط کے غیر پیشہ وارانہ رویے پر اظہار نا پسندیدگی کیا اور میرے ساتھ اظہار یکجہتی کیا۔ میں نے اس بیہودہ خط کا جواب نہ دینے کا فیصلہ کرکے معاملہ اللہ کے سپرد کردیا تھا، اب یہ معاملہ چونکہ سوشل میڈیا پر آچکا ہے اس لیے میں نے یہ ضروری سمجھا کہ آپ لوگوں کے سامنے اس خط پر اپنے تحفظات کا اظہار کروں۔

واضح رہے کہ بھارت میں تعینات پاکستان کے سابق ہائی کمشنر عبدالباسط نے ایک خط لکھا تھا جس میں انہوں نے اعزاز چوہدری کو بدترین سفارتکار قرار دیا تھا، یہ خط منگل کے روز ایک سال سے بھی زائد عرصہ گزر جانے کے بعد منظر عام پر آیا ہے۔

مزید : قومی /اہم خبریں

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...