بنگالی ٹائیگرز نے کینگروز کو دبوچ لیا، آسٹریلیا کو تاریخ میں پہلی مرتبہ ٹیسٹ میچ میں شکست دیدی

بنگالی ٹائیگرز نے کینگروز کو دبوچ لیا، آسٹریلیا کو تاریخ میں پہلی مرتبہ ٹیسٹ ...
بنگالی ٹائیگرز نے کینگروز کو دبوچ لیا، آسٹریلیا کو تاریخ میں پہلی مرتبہ ٹیسٹ میچ میں شکست دیدی

ڈھاکہ (ڈیلی پاکستان آن لائن) بنگلہ دیش نے پہلی مرتبہ آسٹریلیا کو ٹیسٹ میچ میں شکست سے دوچار کر کے نئی تاریخ رقم کر دی ہے۔ شیر بنگلہ نیشنل سٹیڈیم میرپور ڈھماکہ میں کھیلا گیا ٹیسٹ میچ انتہائی سنسنی خیز رہا جس میں شکیب الحسن کی عمدہ کارکردگی کی بدولت کینگروز کو 20 رنز کی تاریخی شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

قومی کرکٹر شرجیل خان پر 5 سال پابندی عائد

265 رنز کے ہدف کے تعاقب میں چوتھے روز کھیل کے آغاز پر آسٹریلیا کے 109 رنز پر 2 کھلاڑی آﺅٹ تھے اور آسٹریلوی ٹیم کی پوزیشن خاصی مضبوط نظر آ رہی تھی۔ ڈیوڈ وارنر نے عمدہ بیٹنگ کرتے ہوئے اپنے کیرئیر کی 19 ویں سنچری بنائی اور کپتان سٹیو سمتھ کیساتھ مل کر چوتھی وکٹ کی شراکت میں 130 رنز جوڑے جو آسٹریلیا کی جانب سے ایشیاءکے کسی بھی ملک میں چوتھی وکٹ کی سب بڑی شراکت داری ہے۔

لیکن سپنرز کیلئے انتہائی سازگار وکٹ پر جیسے ہی ڈیوڈ وارنر اور سٹیو سمتھ نے اپنی وکٹیں گنوائیں تو پوری آسٹریلوی ٹیم کی ڈھیر ہو گئی اور یوں بنگلہ دیش نے 20 رنز سے تاریخی فتح اپنے نام کی۔ اس فتح سے پہلے بنگلہ دیش نے صرف انگلینڈ ، سری لنکا اور زمبابوے کیخلاف ہی ٹیسٹ میچ میں کامیابی حاصل کر رکھی تھی۔

آل راﺅنڈر شکیب الحسن اور بلے باز تمیم اقبال کیلئے یہ فتح انتہائی تاریخی ثابت ہوئی ہے جو اپنے کیرئیر کا 50 واں ٹیسٹ میچ کھیل رہے تھے۔ تمیم اقبال نے پہلی اننگز میں 71 اور دوسری اننگز میں 78 رنز کی اننگز کھیلی ۔ شکیب الحسن نے پہلی اننگز میں 84 رنز بنائے اور 5 وکٹیں حاصل کیں جبکہ دوسری اننگز میں ان کا بلا رنز اگلنے میں ناکام رہا اور وہ 5 رنز بنا کر ہی پویلین لوٹ گئے مگر گیند کیساتھ انہوں نے کینگروز کو چکرا کر رکھ دیا اور 5 کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی۔

واضح رہے کہ بنگلہ دیش نے ٹاس جیت کر بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا اور پہلی اننگز میں 260 رنز بنائے جس میں تمیم اقبال کے 71 اور شکیب الحسن کے 84 رنز بھی شامل ہیں۔ آسٹریلوی ٹیم بنگلہ دیش کے پہلی اننگز کے 260 رنز کے جواب میں 217 رنز پر ہی ڈھیر ہو گئی اور میٹ رینشا نے سب سے زیادہ 45 رنز بنائے۔

بنگلہ دیش نے 43 رنز کی برتری سے دوسری اننگز کا آغاز کیا تو تمیم اقبال پھر مرد میدان ثابت ہوئے اور 78 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی جس کے باعث بنگلہ دیی ٹیم 221 رنز بنانے میں کامیاب ہو سکی اور آسٹریلیا کو جیت کیلئے 264 رنز کا ہدف دیا۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ سہیل تنویر نے ٹی 20 کی تاریخ میں انوکھا ترین کارنامہ سرانجام دیدیا، صرف 3 رنز دے کر کتنی وکٹیں حاصل کیں؟ جواب آپ کے تمام اندازے غلط ثابت کر دے گا

ہدف کے تعاقب میں آسٹریلیا کا آغاز اچھا نہ رہا اور میٹ رینشاءاور عثمان خواجہ جلد ہی پویلین لوٹ گئے مگر ڈیوڈ وارنر نے ناصرف اپنے کیرئیر کی 19 ویں سنچری جڑی بلکہ کپتان سٹیو سمتھ کے ساتھ مل کر چوتھی وکٹ کی شراکت میں 130 رنز جوڑ کر مجموعی سکور کو 158 رنز پر پہنچا دیا۔

تاہم ان کی یہ تمام محنت رائیگاں گئیں اور بنگلہ دیشی باﺅلرز نے اپنی ’جادوئی‘ باﺅلنگ سے میچ کا نقشہ یکسر بدل کررکھ دیا اور سنسنی خیز مقابلے کے بعد بالآخر 20 رنز سے شکست دے کر تاریخ رقم کر دی۔

مزید : کھیل

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...