شہادت امام حسینؓ در حقیقت حق کی فتح ہے،صدر، وزیر اعظم 

  شہادت امام حسینؓ در حقیقت حق کی فتح ہے،صدر، وزیر اعظم 

  

 اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) صدر مملکت عارف علوی اور وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ محرم الحرام ہمیں وہ جذبہ ِصادق عطا کرتا ہے جس کی بدولت ہم بڑی سے بڑی آزمائش کا مقابلہ کر سکتے ہیں،ہمیں باہمی نفاق، فرقہ واریت اور مذہبی منافرت کو با لائے طاق رکھ کر ملکی ترقی اور خوشحالی کیلئے مل کر کام کر نا چاہیے،ہمیں بھارتی غیر قانونی مقبوضہ جموں و کشمیر میں بھارتی سامراج سے برسرپیکار عوام کی قربانیوں کو بھی خراجِ تحسین پیش کرنا چاہیے جنہوں نے حق پر قائم رہتے ہوئے سنتِ امام حسینؓ کو زندہ رکھا اور کربلا کی طرح کشمیر کو بھی معرکہ حق و باطل کی ایک عظیم مثال بنا دیا ہے، امید ہے عوام کورونا وائرس سے محفوظ ماحول میں یوم عاشور عقیدت و احترام کے ساتھ، فرقہ واریت اور تعصب کو بالائے طاق رکھتے ہوے منائیں گے اور امن و امان کوبھی یقینی بنائیں گے۔ ہفتہ کو صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے یوم عاشور محرم الحرام 1442ھ کے موقع پر قوم کے نام اپنے پیغام میں کہا کہ یوم ِعاشور یعنی دس محرم الحرام کو اللہ تعالیٰ نے روز ِاوّل سے ہی خاص شرف بخشا ہے۔ اس دن تاریخ ِانسانیت کے بہت سے اہم واقعات رونما ہوئے ہیں، جیسا کہ حضرت آدم ؑکی توبہ قبول ہوئی، جناب نوحؑ کی کشتی سلامتی سے جودی پہاڑ پراتری، حضرت سیدنا ابراہیمؑ پر نارِ نمرود گلزار ہوئی اور دوسرے خلیفہ حضرت عمرؓ بھی یکم محرم الحرام کو شہادت کے درجہ پر فائز ہوئے۔ انہوں نے کہا کہ حضور نبی کریم خَاتم اَلنّبِیین صلی اللہ علیہ و علی آ لہ و اصحاٰبہ و سلم کے نواسہ جناب امامِ عالی مقام حضرت ِ امام حسینؓ نے اپنے اہلِ بیت ِاطہار اور رفقائے کار کے ساتھ میدان کربلامیں یومِ عاشورکو شہادت پا کر تاریخ اسلام میں اس دن کو قیامت تک کیلئے خاص بنا دیا۔ اس دن نواسہ رسول خَاتم اَلنّبِیین صلی اللہ علیہ و علی آ لہ و اصحاٰبہ و سلم کی شہادت کا عظیم واقعہ ہر سال مسلمانوں کو اس بات کی یاد دلاتا ہے کہ ظالم اور باطل قوتوں کا مقابلہ کرنے کے لئے وقت آنے پر جان کا نذرانہ پیش کرنے سے بھی دریغ نہیں کرنا چاہیے۔ صدر مملکت نے کہا کہ شہادت امام حسینؓ در حقیقت حق کی فتح، ظالم و جابر کے سامنے ڈٹ جانے اور ایثار و قربانی کا استعارہ ہے۔ 

 صدر، وزیر اعظم 

مزید :

صفحہ اول -