شہدائے کربلا کے جذبہ ایثار،قربانی پر عمل پیرا ہو کر تمام مشکلات پر قابو پایا جا سکتا:سپیکرڈپٹی،سپیکر قومی اسمبلی

شہدائے کربلا کے جذبہ ایثار،قربانی پر عمل پیرا ہو کر تمام مشکلات پر قابو پایا ...

  

  اسلام آباد(این این آئی)سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اور ڈپٹی سپیکر قاسم خان سوری نے یوم عاشور کے موقع پر قوم کے نام اپنے پیغامات میں کہا ہے کہ واقعہ کربلا اللہ تعالیٰ اور یوم آخرت پرغیر متزلزل ایمان، بے مثال تقویٰ، بہادری، اللہ کی راہ میں صبر اور قرآن مجید میں بیان شہادت کے جذبے کا ایک بہترین نمونہ ہے جسے قیامت تک یاد رکھا جائے گا۔سپیکر نے کہا کہ واقع کربلا ہمیں حضرت امام حسین ؓ اور ان کی ساتھیوں کی ان عظیم قربانیوں کی یاد دلاتا ہے جو انہوں نے حق اور سچ کی خاطر دیں۔ انہوں نے کہا کہ حضرت امام حسین ؓ اور ان کے ساتھی قرآنی تعلیمات، برداشت، قربانی اور جذبہ شہادت کی ایک لازوال مثال ہیں۔ سپیکر نے کہا کہ بحیثیت مسلمان یہ ہماری اجتماعی ذمہ داری ہے کہ ہم ان طاغوتی قوتوں کے سامنے ڈٹ کر کھڑے ہو جائیں جو اپنے مذموم مقاصد کے حصول کے لیے معاشرے میں انتشار پھیلارہی ہیں۔انہوں نے کہا کہ شہدائے کربلا کو خراج عقیدت پیش کرنے کا بہترین طریقہ یہ ہے کہ ہم انسانیت کی بھلائی اور ملکی تعمیر و تر قی کے لیے خود کو وقف کر دیں۔ انہوں نے یوم عاشورہ کی قربانی کو باطل کے خلاف دی جانے والی عظیم قربانی قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ قربانی قیامت تک آنے والوں کے لیے مشعل راہ ثابت ہوگی۔اس موقع پر ڈپٹی سپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے کہا کہ واقعہ کربلا جو سچ اور باطل قوتوں کے درمیان پیش آیا وہ مسلمانوں کو باطل قوتوں کے خلاف سینہ سپر ہونے کا درس دیتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہی وہ راستہ ہے جس پر ہمارے پیارے نبی خاتم النبیین حضرت محمد ؐنے ہمیں عمل پیرہ ہونے کا درس دیا ہے اور جس پر چل کر حضرت امام حسین ؓ اور ان کے ساتھیوں نے لازوال قربانیاں پیش کیں۔ انہوں نے کہا کہ واقعہ کربلا سے ہمیں یہ سبق دیتا ہے کہ ملک و قوم پر جب بھی مشکل وقت آن پڑے تو کسی بھی قسم کی قربانی سے دریغ نہیں کرنا چاہیے۔

پیغام

مزید :

صفحہ آخر -