واقعہ کربلا تاریخ اسلام کا سب سے اہم موڑ ہے،ڈاکٹر حبیب الرحمن

  واقعہ کربلا تاریخ اسلام کا سب سے اہم موڑ ہے،ڈاکٹر حبیب الرحمن

  

گوجرانوالہ(بیورورپورٹ)پاکستان سنی تحریک کے ضلعی صدر علامہ ڈاکٹر حبیب الرحمن، پاکستان سنی فورس کے سالار عدیل عارف چودھری، سٹی صدر پاکستان مسلم لیگ علما مشایخ ونگ صاحبزادہ محمد طاہر رضوی نے کہا ہے کہ واقعہ کربلا تاریخ اسلام کا سب سے اہم موڑ ہے جب حضرت امام حسین ؓ اسلامی اصولوں اور قدروں کی بقا و بحالی کے لیے یزید کے خلاف میدان جنگ میں اترے تھے۔  ان خیالات کا اظہار انہوں نے پاکستان مسلم لیگ کے زیر اہتمام شہادت امام عالی مقام کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔  مقررین نے کہا کہ حضرت امام حسین ؓ نے جس پامردی اور صبر سے کربلا کے میدان میں باطل کی قوتوں کے سامنے سرنگوں نہ ہو کر حق و انصاف کے اصولوں کی بالادستی، حریت فکر اور خدا کی حاکمیت کا پرچم بلند کرکے اسلامی روایات کی لاج رکھی اس کی مثال انسانی تاریخ میں نہیں ملتی۔  آپ نے آئندہ آنے والی نسلوں کو پیغام دے دیا کہ مومن کبھی باطل کے سامنے نہیں جھک سکتانبی کریم کہ گھرانے کی محبت ھمارے ایمان کا حصہ ہے امام حسین کہ نقشے قدم پر چل کر ہماری نجات کا ہے امام حسین اور آپ کہ پیاروں نے اپنی قیمتی جانوں کا نزرانہ دے کر نبی کریم اپنے نانا کہ دین کو بچایا حضور نبی کریم کہ گھرانے کی محبت ہمارے ایمان کا حصہ ہے جس کہ بغیر ہمارا ایمان مکمل نہیں ہوسکتا۔ کانفرنس میں موقع پر سنی اتحاد کونسل کے رہنما صاحبزادہ نعمان صدیقی، ادارالمصطفیٰ کے رہنما علامہ طیب مصطفائی، انجمن صدیقیہ کے ضلعی صدر علامہ عمر فاروق صدیقی، انجمن طلبہ اسلام کہ رہنما حافظ احسان رضا سمیت دیگر نے شرکت کی۔ 

مزید :

علاقائی -