تعلیمی اداروں کی نجکاری غریب طبقے کے ساتھ زیادتی ہے،پی پی انسانی حقوق ونگ

تعلیمی اداروں کی نجکاری غریب طبقے کے ساتھ زیادتی ہے،پی پی انسانی حقوق ونگ

لاہور(نمائندہ خصوصی) پیپلز پارٹی انسانی حقوق ونگ لاہور کے صدر نصیر احمد، شیخ علی سعید، عبدالکریم میو، یامین خان آزاد، اختر شاہ اور میاں راشد نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا کہ تعلیم ہر بچے کا بنیادی حق ہے اور آئین میں درج ہے کہ ریاست ہر بچے کو تعلیمی سہولیات اور تعلیم مفت مہیا کرے گی لیکن مسلم لیگ (ن) کی حکومت میں اقتدار میں آتے ہی پنجاب کے تمام محکموں خصوصاً تعلیم اور صحت کے محکموں کو تباہ کر دیا گیا ہے ان محکموں کا بجٹ میٹرو اور اورنج ٹرین میں لگایا جا رہا ہے۔ پنجاب حکومت نے تعلیم سے پیچھا چھڑانے کے لیے تعلیمی اداروں کو اپنے پیاروں اور این جی اوز میں تقسیم کرنے کی منصوبہ بندی کر لی ہے پنجاب حکومت کی تعلیم دشمن پالیسیوں کے باعث پہلے ہی تعلیمی اخراجات میں کئی سو گنا اضافہ ہو چکا ہے پرائیویٹ تعلیمی ادارے فیسوں میں بلا جواز اضافہ کرتے رہتے ہیں جس سے غریبوں اور متوسط طبقوں کا پرائیویٹ سکولوں میں بچوں کا پڑھانا مشکل ہو چکا ہے گورنمٹ کے تعلیمی اداروں کو پرائیویٹ کرنے سے غریبوں کے بچوں کو تعلیم ایک خوب بن جائے گا پنجاب میں پہلے ہی کئی لاکھ بچے تعلیم حاصل کرنے سے محروم ہیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...