الزامات کا جواب نہ دینے والے ریونیو اہلکار کے خلافکارروائی کا فیصلہ

الزامات کا جواب نہ دینے والے ریونیو اہلکار کے خلافکارروائی کا فیصلہ

لاہور(عامر بٹ سے)محکمہ اینٹی کرپشن حکام نے الزامات کے جواب سے انکاری سرکاری اہلکار کے خلاف قانونی کاروائی کرنے کا فیصلہ کر لیا تفصیلات کے مطابق پی آئی اے سوسائٹی میں ساڑھے چار کروڑ روپے سے زائد کی بیش قیمتی کوٹھی اور ناجائز اثاثہ جات بنانے کے الزام کے تحت انکوائری میں شامل تفتیش محکمہ ریونیو کا کلرک ریاض حسین بار بار کے نوٹس طلبی کے باوجود حاضر نہ ہوا ، محکمہ اینٹی کرپشن میں درخواست دائر کرتے ہوئے شہری عمر حیات نے موقف اختیار کیا کہ محکمہ ریونیو کے کلرک ریاض حسین نے اپنی سروس کے دوران کرپشن کی انتہا کرتے ہوئے پی آئی اے کوآپریٹو سوسائٹی میں ساڑھے چار کروڑ سے زائد کی کوٹھی سمیت دیگر پوش علاقوں میں کروڑوں روپے کی جائیدادیں ،بھاری بنک بیلنس ،غیر قانونی اثاثہ جات ، بنا رکھے ہیں،جبکہ قبضہ چٹھی ایگریمنٹ موقع پوزیشن سے لے کر ملکیت کے تمام کاغذات کے حوالے پی آئی اے کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹی انتظامیہ نے ریاض حسین زاہد کے حوالے سے مکمل تصدیق کر دی ہے ،مذکورہ اہلکار کے ایچ آر سی برانچ میں تعیناتی کے دوران اقبال ٹاؤن اور نشتر ٹاؤن کے رجسٹری محرر کروڑوں روپے کی سرکاری فیسیں لے کر فرار ہو گئے تھے جس میں حکومتی خزانے کو 80کروڑ روپے سے زائد نقصان پہنچایا گیا تھا اور بعد ازاں اپنے اثرورسوخ اور مخصوص لابی کی ملی بھگت سے اپنا نام بھی انکوائری سے نکالنے میں کامیاب ہو گیا تھاجو اس وقت بھی محکمہ اینٹی کرپشن میں زیر سماعت ہے ، درخواست کی وصولی کے بعد محکمہ اینٹی کرپشن نے مذکورہ اہلکار کو تین بار نوٹس طلبی کے ذریعے اپنی صفائی بیان کرنے کے لئے طلب کیا لیکن حاضر نہ ہوا جس کے بعد محکمہ اینٹی کرپشن نے ریاض حسین زاہد کے خلاف یکطرفہ کارروائی کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...