حیدرآباد :آئی جی سندھ کی زیر صدارت امن و امان سے متعلق اجلاس

حیدرآباد :آئی جی سندھ کی زیر صدارت امن و امان سے متعلق اجلاس

  

حیدرآباد (بیورو رپورٹ)آئی جی سندھ پولیس کلیم امام کی زیر صدارت امن و امان سے متعلق اجلاس منعقد ہوا ۔اجلاس میں ڈی آئی جی حیدرآباد،ایس ایس پی سرفراز نواز, ایس ایس پی توقیر احمد اور دیگر افسران نے بریفنگ دی۔ آئی جی سندھ نے شہر میں امن وامان کی صورتحال پر اطمینان کا اظہار کیا ۔بعد ازاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ آئی جی سندھ نے کہا کہ پولیس اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی کوششوں سے دہشتگردی میں کمی آئی پولیس نے بہت سارے دہشتگردی کے منصوبے بھی ناکام بنائے جبکہ دہشتگردگرفتار بھی ہوئے ۔کوشش ہے کہ ماضی کی غلطیوں سے سیکھ کر پولیس کو بہتر بنائیں پولیس چوبیس گھنٹے کام کررہی ہوتی ہے تاکہ شہریوں کو پرامن ماحول دیا جاسکے ۔رواں سال پولیس میں بہت بہتری آئی ہے ۔عوام کے تحفظ لئے کام کررہے ہیں مزید بہتری کی کوشش کررہے ہیں ۔کراچی میں ٹارگٹ کلنگ کے چھپے ہوئے کچھ گروپ سراٹھانا چاہتے ہیں۔ علی رضا عابدی کے کیس میں بڑی پیشرفت ہوئی ہے ۔علی رضا عابدی کے قتل میں پولیس کو اہم کامیابی ملی ہے تفصیل ابھی بتا نہیں سکتے۔ کراچی میں دہشت گردی کے پیچھے بیرون ملک سے کچھ گروپ کے ملوث ہونے کے شواہد ملے ہیں جنہیں ٹریس کرکے قانون کی گرفت میں لایا جائے گا رواں سال کے آخری ماہ کچھ وارداتیں ہوئی ہیں جرائم کبھی ختم نہیں ہوتے۔ پولیس اپنی حکمت عملی کے تحت کنٹرول کرتی ہے سندھ میں اغوا برائے تاوان کے 35کیسز ہیں جو گزشتہ سال کی نسبت کم ہیں ۔علی رضا عابدی کے قتل کے بعد بہت سے افراد کو سکیورٹی دی ہے ہمیں درخواستیں موصول ہوئیں۔متعدد سیاسی ومذہبی شخصیات کو سکیورٹی دی ہے جنہیں سکیورٹی خطرات لاحق ہیں انہیں سکیورٹی دے رہے ہیں۔ وی وی آئی پیز کو قانون کے مطابق سیکیورٹی دی جاتی ہے عوام کا تحفظ اولین ترجیح ہے کہیں کوئی کوتاہی نظر آتی ہے تو میڈیا کے دوست نشاندہی بھی کرتے ہیں میڈیا کے دوست پولیس میں بہتری کی تجاویز دیں ہم عملدرآمد کریں گے۔ سندھ پولیس بہترین ادارہ ہے پولیس اصلاحات پر کام ہورہا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -