نوجوان سی پیک میں نئے مواقع تلاش کریں،فائز امیر

نوجوان سی پیک میں نئے مواقع تلاش کریں،فائز امیر

  

کراچی(پ ر) ایئر یونیورسٹی کے وائس چانسلر ایئر وائس مارشل (ر) فائز امیر نے پاک چین اقتصادی منصوبے کو قومی ترقی کیلئے ناگزیر قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوان سی پیک منصوبے کی بدولت ترقی کے نت نئے مواقع تلاش کریں، انہوں نے ان خیالات کا اظہار گزشتہ چودہ برسوں سے فارغ التحصیل ہونے والے گریجوئٹس کے اعزاز میں منعقدہ الومنائی تقریب سے کیا ، اس موقع پرمجموعی طور پرتاحال لگ بھگ پانچ ہزار گریجوئٹس کو ایئر الومنائی نیٹ ورک کے تحت متحد کرنے کے عزم کا بھی اعادہ کیاگیا ۔ مہمانِ خصوصی وائس چانسلر نے اپنے خطاب میں زور دیا کہ پاکستان کی عالمی منظرنامہ میں خاص اہمیت ہے اور پاکستان اپنے ارد گرد رونماء ہونے والی علاقائی تبدیلیوں سے لاتعلق نہیں رہ سکتا، انہوں نے کہا کہ طلباء و طالبات کو سی پیک منصوبے کے تحت مختلف پراجیکٹس میں اپنی صلاحیتوں کا بھرپور مظاہرہ کرنا چاہیے، وائس چانسلر فائز امیر نے شرکاء سے کہا کہ وہ عملی زندگی میں اعلیٰ مقام بنانے کی جدوجہد میں اپنے رابطے مادرعلمی ایئریونیورسٹی سے مستحکم رکھیں، انہوں نے توقع ظاہر کی کہ سالِ نو میں ایئریونیورسٹی کے الومنائی یونیورسٹی اور انڈسٹری کے مابین موثر پُل کا کردارمزید احسن انداز میں ادا کریں گے۔اس موقع پر ایئر وائس مارشل (ر)فائز امیر نے آگاہ کیا کہ اس وقت ایئریونیورسٹی کے تین کیمپس موجود ہیں، کامرہ ایوی ایشن سٹی میں ایئر یونیورسٹی کا سنگ بنیاد رکھا جاچکا ہے، ایئر یونیوسٹی کا دائرہ کار ملک بھر میں پھیلانے کیلئے کوشاں ہیں۔ وائس چانسلر نے فارغ التحصیل طلباء و طالبات کیلئے نیک خواہشات کا اظہار کرتے ہوئے تلقین کی کہ وہ اپنی محنت و قابلیت کی بناء پر اپنے پیشہ ورانہ اداروں میں ایئر یونیورسٹی کا نام روشن کریں ۔ اس موقع پر سینئرڈین،ایڈوائزرڈاکٹر ظفراللہ قریشی اور ڈپٹی ڈائریکٹر اسٹوڈنٹ افیئرز فضائلہ علی قاضی نے بھی الومنائی تقریب کے شرکاء سے اظہار خیال کیا،الومنائی تقریب میں انجینئرنگ، بزنس ایڈمنسٹریشن، کمپیوٹر سائنس اور سوشل سائنسز سے تعلق رکھنے والے گریجوئٹس و فیکلٹی اساتذہ، ڈائریکٹرز اور ڈیپارٹمنٹ کوآرڈینیٹرزنے بھرپور شرکت کی،فارغ التحصیل طلباو طالبات کا میڈیا سے گفتگو میں کہنا تھا کہ انہیں اپنی مادر علمی میں واپس آکر بہت اچھا محسوس ہورہا ہے، انہوں نے یونیورسٹی انتظامیہ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے ایسی تقاریب باقاعدگی سے منعقد کرانے کی اہمیت پر زور دیا۔بعد ازاں تقریب کے شرکاء کے اعزاز میں میوزیکل پرفارمنس اور عشائیہ کا بھی اہتمام کیا گیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -