سعد رفیق کیخلاف ریلوے اراضی لیز کیس میں ایک اور انکوائری کی منظوری

سعد رفیق کیخلاف ریلوے اراضی لیز کیس میں ایک اور انکوائری کی منظوری

  

لاہور ( این این آئی) قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس (ر) جاوید اقبال نے مسلم لیگ (ن) کے رکن قومی اسمبلی و سابق وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق کے خلاف ریلوے اراضی لیز کرنے کے کیس پر ایک اور انکوائری کی منظوری دے دی۔تفصیلات کے مطابق سابق وزیرریلوے کے دور میں لاہور، قصور اور فیصل آباد میں سینکڑوں ایکڑ اراضی غیر قانونی طور پر 33 برسوں کی لیز پر آلاٹ کی گئی۔ذرائع کے مطابق اراضی کی لیز کا معاہدہ مشکوک اور قواعد و ضوابط بھی جعلسازی سے طے کئے گئے، اسٹیٹ لینڈ کو خاص طور پر پیٹرول پمپس اور دیگر کمرشل دکانوں کے لئے مختص کیا گیا تھا ۔ریلوے کی اراضی ریاست کی اراضی ہوتی جسے لیز نہیں کیا جاسکتا تھا۔ سعد رفیق نے مختلف کمپنیز کے ذریعے یہ اراضی قواعد سے ہٹ کر لیز کی۔ ایسے شواہد ملے ہیں کہ ریلوے اراضی پہلے کمپنیوں کے نام پر لیز ہوئی بعد ازاں یہی اراضی من پسند افراد کو لیز کی گئی، چیئر مین نیب نے جلد از جلد انکوائری مکمل کرکے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کردی۔

انکوائری

مزید :

صفحہ اول -