جرمن کمپنی نے ایران کو سپئرپارٹس کی فروخت بند کر دی

جرمن کمپنی نے ایران کو سپئرپارٹس کی فروخت بند کر دی

  

برلن (این این آئی)جرمنی میں اسپیر پارٹ تیار کرنے والی کمپنی کریمپل نے ایران کو اجزاء کی فروخت بند کر دی ہے اور کہا ہے کہ تہران اس کی تیار کردہ مصنوعات کو میزائلوں کی تیاری میں استعمال کرتا ہے۔عرب ٹی وی کے مطابق جرمن کمپنی کے تیار کردہ اجزاء دوہرے مقاصد کے لیے استعمال کیا جاسکتا ہے۔ یہ اسپیر پارٹس ایرانی کمپنیوں کو فروخت کیے جاتے رہے ہیں۔ ایرانی پاسداران انقلاب انہیں میزائل سازی کے لیے استعمال کرتا ہے۔امریکی ویب سائٹ نے اپنی رپورٹ میں جرمن کمپنی کے اقدام کو امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی ایک اور کامیابی قرار دیا ہے۔ ویب سائیٹ کے مطابق جرمن کمپنی نے ایران کے جوہری پروگرام پر امریکی پابندیوں میں واشنگٹن کے ساتھ تعاون کیا ہے۔امریکی ویب سائیٹ کے مطابق ایان میں تیارکردہ میزائل شام میں بشار الاسد کو مہیا کئے گئے اور وہ عام شہریوں اور بچوں پر کیمیائی حملوں کے لیے انہیں استعمال کرتے رہے ہیں۔جرمنی میں متعین امریکی سفیر رچرڈ گرینیل نے کمپنی کو ایران پر پابندیوں میں امریکا کیساتھ تعاون پر قائل کیا۔

اور تہران پر اقتصادی دباؤ بڑھانے کی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی پالیسی میں انہیں اپنے ساتھ شامل کیا ہے

مزید :

علاقائی -