گیس کمپریسر استعمال کرنے والوں کیخلاف کریک ڈاؤن، 50گھروں کے کنکشن منقطع

گیس کمپریسر استعمال کرنے والوں کیخلاف کریک ڈاؤن، 50گھروں کے کنکشن منقطع

  



لاہور(خبر نگار) جی ایم سوئی ناردرن گیس کمپنی لاہور ریجن شہزاد اقبال لون کے مطابق ایم ڈی سوئی ناردرن گیس کمپنی عامر طفیل کی خصوصی ہدایات پر سوئی ناردرن گیس کمپنی لاہور ریجن نے گزشتہ تین روز میں کمپریسر کے خلاف بڑے پیمانے پر کریک ڈاؤن کر کے 405گھروں کے گیس کنکشن منقطع کر دیے ہیں۔ شالیمار،سنگھ پورہ،کوٹ خواجہ سعید،راوی روڈ،کریم پارک، نظام آباد، اچھرہ، مغل پورہ، غازی آباد،مصطفی آباد، گلشن راوی، گلبرگ، شادباغ،فتح گڑھ، چونگی امر سدھو، چوبرجی، باغبانپورہ، ساندہ سمیت جوہر ٹاؤن اور اندرون شہر سمیت 50 سے زائد علاقوں میں چھاپے مارے گئے۔بعض افراد نے سوئی گیس کمپنی کی ٹیموں کے ساتھ بدتمیزی  اور ہاتھا پائی بھی کی۔اس کے باوجود سوئی گیس کمپنی کی ٹیمیں آر ایم ویسٹ عمران صفدر ورک اور چیف انجینئر راشد عنائت کی نگرانی میں روزانہ کی بنیاد پر کریک ڈاؤن کر رہی ہیں۔جس کے لئے گلبرگ ایریا آفس کے ساتھ ساتھ سب ایریا دفاتر میں بھی ٹیموں کو تشکیل دیا گیا ہے جس سب آفس ہربنس پورہ میں چیف انجینئر علاؤالدین خان کی نگرانی میں سینئر ایگزیکٹو نجم ملک اور دیگر ملازمین پر مشتمل تین ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔سوئی گیس آفس جوہر ٹاؤن میں چیف انجینئر افتخار احمد کی نگرانی میں تین ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں جبکہ گلبرگ ایریا آفس سے 10ٹیموں کو اس مقصد کے لئے ٹارگٹ دیا گیا ہے۔ پتوکی، بھائی پھیرواور قصور میں بھی دو دو ٹیموں کو تشکیل دیا گیا ہے۔ جی ایم شہزاد اقبال لون کا  مزیدکہنا ہے کہ کمپریسر کا استعمال غیر قانونی ہے اور کمپریسر کے استعمال پر بغیر کسی نوٹس کے کنکشن منقطع کر دیا جائے گااور تین ماہ تک گیس کنکشن بحال نہیں کیا جائے گااس میں صارفین کو چاہیے کہ گھروں میں کمپریسر کا ہرگز استعمال نہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ جن علاقوں میں گیس کے کم پریشر کی شکایات ملی ہیں وہاں بنیادی وجہ کمپریسر کا استعمال سامنے آیا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...