قائد اعظم ؒ کے فرمان پر عمل پیرا ہو کر پاکستان اسلامی فلاحی ریاست کا خواب پورا کر سکتا ہے: ڈاکٹر الغامدی 

قائد اعظم ؒ کے فرمان پر عمل پیرا ہو کر پاکستان اسلامی فلاحی ریاست کا خواب ...

  



جدہ (محمد اکرم اسد) جدہ میں مجلس محصورین پاکستان کے زیراہتمام بابا ئے قوم قائد اعظم ؒکے 144 ویں یوم پیدائش کی مناسبت سے ایک پْروقار تقریب ہوئی جس کی صدارت سابق سعودی سفارتکارمعروف دانشورڈاکٹر علی الغامدی نے کی،پاک سعودی فرینڈ شپ کے صدر خالد رشید مہمان خصوصی تھے، نظامت کے فرائض سید مسرت خلیل نے انجام دئیے، ڈاکٹرالغامدی نے اپنے خطاب میں پی آرسی کو بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح ؒکے یوم پیدائش کی مناسبت سے تقریب منعقد کرنے پر مبارکباد دی۔ انہوں نے کہا کہ محمد علی جناح ؒایک عظیم رہبر تھے جو پاکستان بنانے میں کامیاب ہوئے اور با بائے قوم کہلائے۔ انہوں نے کہا کہ اگر پاکستانی اپنے قائد کے فرمان "اتحاد، یقین اور تنظیم" پر عمل پیرا ہوں  تو وہ پاکستان کو ایک اسلامی فلاحی ریاست بنانے کاخواب پورا کر سکتے ہیں۔ انہوں نے پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان سے بنگلہ دیش سے پھنسے ہوئے پاکستانیوں کی فوری وطن واپسی اور آباد کاری کیلئے اقدامات کرنے کی اپیل کی۔ انہوں نے بنگلہ دیشی وزیر اعظم سے بھی اپیل کی کہ وہ محصورین کے ساتھ انسانیت کا سلوک کریں۔ کنوینر سید احسان الحق نے ڈاکٹر غامدی اور مہمانوں کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے مندرجہ ذیل قرار دادیں پیش کیں جن کو سامعین نے منظور کیا۔ہم وزیر اعظم عمران خان سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ محصورین پاکستانیوں کو پاسپورٹ جاری کریں اور ان کی وطن واپسی اور آبادکاری دوبارہ شروع کریں۔ فنڈ کی قلت پر قابو پانے کے لئے، "سیلف فنانس پی آر سی کی تجویز پر عملدرآمد کریں۔بنگلہ دیش کو بھی اس مسئلے کے حل کرنے میں اپنا کردار ادا کرنا چاہئے۔ ڈھاکہ میں پاکستانی ہائی کمشنر کو بنگلہ دیش میں پھنسے ہوئے کواٹر ملین پاکستانیوں کی خوراک، صحت، زندگی اور حفاظت کا خیال رکھنے کی ذمہ داری دی جائے۔ ہم مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کے مظالم کی مذمت کرتے ہیں جو 5 ماہ سے بنیادی سہولتوں سے محروم ہیں۔ پاکستان حکومت اقوام متحدہ، امریکہ اور دیگر سپر طاقتوں کے اثر و رسوخ کو بھارت پر استعمال کرنا چاہئے تاکہ وہ کشمیری عوام کی مرضی کے مطابق کشمیر میں رائے شماری کو یقینی بنائے۔. ہم ہندوستان کے مسلمانوں کی آواز کو کچلنے اور بنیادی حقوق سے محروم کرنے کیلئے ہنگامی قوابین کی مذمت کرتے ہیں۔

ڈاکٹر الغامدی 

مزید : صفحہ آخر