شیخوپورہ ویڈیو سکینڈل،مرکزی ملزمہ سٹاف نرس گرفتار

   شیخوپورہ ویڈیو سکینڈل،مرکزی ملزمہ سٹاف نرس گرفتار

  



شیخوپورہ(آئی این پی)سنبل سرجیکل اینڈ گائنی ہسپتال ویڈیو سکینڈل سنسنی خیز رخ اختیار کرگیا، ضلعی انتظامیہ کی طر ف سے ہسپتال کے آپریشن تھیٹر کو سیل کرنے کے بعد ڈی پی او شیخوپورہ غازی صلاح الدین نے ڈی ایس پی سٹی خالد محمود اور ایس ایچ او تھانہ بی ڈویژن پولیس عامر محبوب کی سربراہی میں ٹیم تشکیل دیکر مرکزی ملزمہ سٹاف نرس طاہرہ کو گرفتار کرلیا اورمذکورہ سٹاف کے خلاف 292اے پ ت اور292بی پ ت کے مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کردی جبکہ درخواست گزار زمان ڈوگر کے خلاف بھی انہیں دفعات کے تحت مقدمہ درج کرلیا ہے جس کی گرفتاری کیلئے پولیس جگہ جگہ چھاپے ماررہی ہے ابتدائی تفتیش میں ایس ایچ او بی ڈویژن عامر محبوب نے بتایا کہ ویڈیو سکینڈل میں مرکزی ملزمہ طاہرہ جو سنبل سرجیکل اینڈ گائنی ہسپتال میں سٹاف نرس ہے یہ زچگی کے دوران نازیبا ویڈیوز بنا کر اپنے منگیتر زمان ڈوگر کو دیتی تھی مزید تحقیقات جاری ہیں جن سے تمام حقائق جلد سامنے  آجائیں گے، ڈی پی او شیخوپورہ غازی صلاح الدین اس کیس میں خصوصی دلچسپی لے رہے ہیں لوگوں کی عزتوں سے کھیلنے والوں کیساتھ آہنی ہاتھوں نمٹیں گے جبکہ دوسری جانب ہسپتال کے چیف ایگزیکٹو سرفراز احمد گادی کی مدعیت میں پولیس نے ایف آئی آر درج کرلی ہے اور سٹاف نرس طاہرہ اور درخواست گزار زمان ڈوگر کو نامزد ملزم قرار دیدیا ہے ہسپتال کے چیف ایگزیکٹو سرفراز گادی نے ایف آئی آر میں موقف اختیار کیا ہے کہ سٹاف نرس طاہرہ درخواست گزار زمان ڈوگر کو اپنا منگیتر ظاہر کرتی تھی اور اس کا ہسپتال میں آنا جانا تھا اس دوران سٹاف نرس طاہرہ نے زچگی کے دوران آپریشنز کی ویڈیوز بنا کر زمان ڈوگر کو دیں جو ویڈیو پر منظر عام پر آنے کے بعد ہمیں اور ہمارے ہسپتال کو بدنام کرنے کی دھمکی دیکر بلیک میل کرنے لگا۔

نرس گرفتار

مزید : صفحہ آخر


loading...