وزیرا عظم چور دراوزے سے آرڈیننس  لاکر اپنے دوستوں کو نیب سے بچانا  چاہتے ہیں‘ سابق وزیرملک احمد یار ہنجرا 

وزیرا عظم چور دراوزے سے آرڈیننس  لاکر اپنے دوستوں کو نیب سے بچانا  چاہتے ...

  



کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر)سابق صوبائی وزیر جیل خانہ جات ملک احمد یار ہنجراء نے نیب ترمیمی آرڈیننس 2019ء کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمام سیاسی جماعتوں کی مشاورت کے بغیرصدارتی محل کے چور دروازے سے(بقیہ نمبر26صفحہ12پر)

 آرڈیننس لاکر وزیراعظم اپنے دوستوں کو نیب سے استثنیٰ دلوا نا چاہتے ہیں،اگر یہ آرڈیننس ضروری تھا تو چور دروازے سے کیوں لایا گیا،نیب کیلئے ایسا قانون بنایا جائے جس میں تمام سیاسی جماعتوں کی مشاورت شامل ہو،حادثاتی طور پر منتخب ہونے والے نمائندے ان کے سابقہ دور میں منظور ہونے والے منصوبوں پر اپنی تختیاں لگا عوام کو بے وقوف بنا رہے ہیں،حلقہ کی عوام کو ترقی سے محروم رکھا جا رہا ہے، ان شاء اللہ عوامی ووٹوں کی طاقت سے دوبارہ اقتدار میں آکر عوامی محرومیوں کا ازالہ کریں گے،ان خیالات کااظہار انہوں نے ہنجراء ہاؤس پر میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا،انہوں نے کہا کہ اپنی کرپشن کو نیب آرڈیننس کے ذریعے چھپانا نیب نیازی گٹھ جوڑ کا ناقابلِ تردید ثبوت ہے، عمران خان اپنی حکومت کے ہر منصوبے کی انکوائری روکنے کے لئے نیب آرڈیننس لا رہے ہیں، سلیکٹڈ حکومت کا نیب آرڈیننس اپنی کرپٹ حکومت اور دوستوں کو این آر او دینے کی سازش ہے،ملک احمد یار ہنجراء نے کہا کہ حکومت نے کرپٹ عناصر کے بجائے عوام کو دیوار سے لگا دیا ہے، عوام کے وہم و گمان میں بھی نہ تھا کہ پی ٹی آئی کو ووٹ دینے کے ایسے بھیانک نتائج نکلیں گے، آئی ایم ایف کے حکم پر روپیہ سستا کر دیا گیا ہے، عوام پر چھ سو ارب کے نئے ٹیکس لگائے جا رہے ہیں جبکہ عوام کو نئے سال کا تحفہ دینے کیلئے پٹرول کی قیمت میں بھی اضافہ کیا جائے گا، حکومت کے پے درپے حملوں سے بچنے کے لئے عوام کے پاس خودکشی کے علاوہ کوئی راستہ نہیں بچا ہے،انہوں نے کہا کہ اعلیٰ حکومتی عہدیدار کوئی مثبت کام کرنے کے بجائے سابقہ حکومتوں کو لتاڑنے پر لگے ہوئے ہیں، حکومتی اقدامات سے عوام بیزار ہو چکے ہیں۔

احمد یار ہنجرا 

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...