’ وفاقی حکومت کی ڈیڑھ سال کی کارکردگی سے مطمئن نہیں ہیں ‘ ایم کیو ایم پاکستان نے بلاول کی حکو مت گرانے کی پیشکش کا جواب دے دیا

’ وفاقی حکومت کی ڈیڑھ سال کی کارکردگی سے مطمئن نہیں ہیں ‘ ایم کیو ایم ...
’ وفاقی حکومت کی ڈیڑھ سال کی کارکردگی سے مطمئن نہیں ہیں ‘ ایم کیو ایم پاکستان نے بلاول کی حکو مت گرانے کی پیشکش کا جواب دے دیا

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) ایم کیو ایم پاکستان نے چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری کا حکومت گرانے کا مشورہ مسترد کردیا۔

ترجمان ایم کیو ایم کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ وفاقی حکومت سے وزارتوں کےلئے اتحاد نہیں کیا تھا بلکہ وفاقی حکومت سے اتحاد کراچی کے مفاد کی خاطر کیا تھا۔وفاقی حکومت کی ڈیڑھ سال کی کارکردگی سے مطمئن نہیں ہیں لیکن وفاقی حکومت سے علیحدگی کا فیصلہ کسی کی خواہش پر نہیں کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ ایم کیوایم وزارتوں کے بجائے عوامی حقوق کی سیاست کررہی ہے،وزارتوں کی پیشکش کے بجائے بلاول بھٹو مقامی حکومتوں کے نظام کو با اختیاربنائیں، شہری علاقوں کے محکموں کو صوبائی حکومت کے انتظام سے نکال کر مقامی حکومتوں کے اختیار میں دیا جائے۔بلاول بھٹو سندھ اور کراچی کے ساتھ زیادتیوں کے ازالے کو ایجنڈے میں شامل کریں،اگر پیپلز پارٹی مقامی حکومتوں کو با اختیاربنانے کے قانون میں ترمیمی بل لائے تو متحدہ ساتھ دے گی۔

خیال رہے کہ چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے ایم کیو ایم کو پیشکش کی تھی کہ وہ تحریک انصاف کے اتحاد سے نکل جائے اور وفاقی حکومت گرادے۔ ایسا کرنے کی صورت میں انہیں سندھ کی صوبائی حکومت میں شامل کیا جائے گا اور اتنی ہی وزارتیں دے دی جائیں گی جتنی ان کے پاس وفاق میں ہیں۔

مزید : Breaking News /اہم خبریں /قومی /علاقائی /سندھ /کراچی