پیغام پاکستان پر امام کعبہ،مفتیان کے دستخط موجود ہیں،آفتاب درانی

پیغام پاکستان پر امام کعبہ،مفتیان کے دستخط موجود ہیں،آفتاب درانی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور (ڈویلپمنٹ سیل) ”پیغام پاکستان“پر امام کعبہ،ترکی، مصر، انڈونیشیاکے مفتیانِ اعظم سمیت سات ہزار پاکستانی علماء کے دستخط موجود ہیں۔ وزارت ِ مذہبی امور و بین المذاہب ہم کو ”پیغامِ پاکستان“ کی تیاری پر فخر ہے، اس کی ترویج کے لئے تمام توانائیاں صرف کی جائیں گی یہ بات سیکرٹری مذہبی امورڈاکٹر آفتاب اکبر درانی نے ادارہ تحقیقاتِ اسلامی کے زیر اہتمام”پیغامِ پاکستان“ پر ایک روزہ ورکشاپ کے موقع پر کہی۔ ورکشاپ میں وفاقی سیکرٹری مذہبی امور ڈاکٹر آفتاب اکبر درانی، ایڈیشنل سیکرٹری سید عطاء الرحمن اور وزارتِ مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی کے دیگر افسران نے شرکت کی۔ وفاقی سیکرٹری مذہبی امور ڈاکٹر آفتاب اکبر درانی نے کہا کہ وزارتِ مذہبی امور کو ”پیغامِ پاکستان“ کی تیاری پر فخر ہے اور اس کی ترویج کیلئے وزارت تمام توانائیاں صرف کرے گی۔پیغام پاکستان پر امام کعبہ،ترکی، مصر، انڈونیشیاکے مفتیانِ اعظم سمیت سات ہزار پاکستانی علمائے کرام کے دستخط موجود ہیں۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ پیغامِ پاکستان کا متفقہ قومی بیانیہ پْرامن بقائے باہمی، روادار اور اعتدال پسند اسلامی معاشرے کی تشکیل کا ذریعہ بن رہا ہے۔ پیغامِ پاکستان ہر قسم کی دہشت گردی، تعصبات، منافرت، نفرت انگیزی اور عدم برداشت کی نفی کرتا ہے۔


 دین کے نام پر نہتے لوگوں، عورتوں اور بچوں کو نقصان پہنچانے والے عناصر کا انسانیت سے کوئی تعلق نہیں۔ کلمہ توحید اور اسلام کے نام پر بننے والی ریاست کو بہت سے اندرونی و بیرونی خطرات کا سامنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دین ِ اسلام اور آئین پاکستان  تمام غیر مسلم اقلیتوں کی جان، مال اور آبرو کے تحفظ کی ضمانت دیتا ہے۔ ہمیں انفرادی اور بحیثیت قوم معاشرتی اخلاق اور طرز عمل کو سیرت النبی ؐ کے مطابق ڈھالنے کی ضرورت ہے۔ تاریخ اسلام میں مسالک کے فقہی اور علمی نوعیت کے اختلافات کو فرقہ پرستی کے لئے استعمال کرنے کی کوئی مثال موجود نہیں۔ انہوں نے ذرائع ابلاغ، مسجد و منبر، درسگاہوں اور مدارس کے منتظمین پر زور دیا کہ وہ سماجی ہم آہنگی کے فروغ کیلئے پیغامِ پاکستان کی ترویج میں اپنا کردار ادا کریں۔