طلبہ تمام صلاحیتوں کو بروئیے لا کر ملک وقوم کی خدمت کریں،گورنر پنجاب

طلبہ تمام صلاحیتوں کو بروئیے لا کر ملک وقوم کی خدمت کریں،گورنر پنجاب

  



سیالکوٹ/لاہور(بیورورپورٹ،نمائندہ خصوصی) گورنر پنجاب چودھری سرور نے کہا ہے کہ طلبہ و طالبات اعلیٰ تعلیم حاصل کرنے کے بعدتمام تر صلاحیتوں کو بروئے کار لاتے ہوئے ملک و قوم کی خدمت کریں، محنت اور ایمانداری کے ساتھ کام کرنے سے ہی قومیں ترقی کی منازل طے کرتیں (بقیہ نمبر45صفحہ7پر)

ہیں،پنجاب کی یونیورسٹیز کے کانووکیشن میں 80 فیصد پوزیشنز ہماری بیٹیاں لے رہی ہیں اور اگر یہی پوزیشن رہی تو آئندہ 10برسوں میں لڑکوں کیلئے مختلف شعبوں میں کوٹے مختص کرنے پڑیں گے، بدقسمتی سے وطن عزیر میں 20ملین بچے سکولوں سے باہر ہیں جن کو سکولوں میں لانے کیلئے حکومت کوشاں ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گورنمنٹ کالج ویمن یونیورسٹی سیالکوٹ کے دوسرے کانووکیشن کی تقریب سے بطور مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما عمرڈار،وائس چانسلر جی سی ویمن یونیورسٹی سیالکوٹ پروفیسر ڈاکٹر رخسانہ کوثر، ڈپٹی کمشنر سیالکوٹ ڈاکٹر ناصر محمود بشیر، ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر سیالکوٹ کیپٹن (ر) مستنصر فیروز، اسسٹنٹ کمشنر سیالکوٹ جویریہ مقبول رندھاوا، سابق وائس چانسلر جی سی ویمن یونیورسٹی سیالکوٹ پروفیسر ڈاکٹر فرحت سلیمی، چیئرمین بورڈ آف انٹر میڈیٹ اینڈ سکینڈری ایجوکیشن گوجرانوالہ ڈاکٹر طارق محمود قاضی،یونیورسٹی آف نارروال پروفیسر طارق محمود،کنٹرولرکیشان ملک کے علاوہ اراکین سینڈیکیٹ، اکیڈیمک کونسل،یونیورسٹیز کے وائس چانسلرز،نمائندگان ایوان صنعت تجارت سیالکوٹ، سماجی شخصیات اور میڈیا نمائندوں نے بھرپور شرکت کی۔گورنر پنجاب نے جی سی وویمن یونیورسٹی سے ڈگریز حاصل کرنے والی 1233طالبات کیلئے نیک خواہشات کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ یہ سب ان کے والدین کے بعد یونیورسٹی کے اساتذہ کی محنت کاثمر ہے پرجس پر طالبات کے والدین،یونیورسٹی کی وائس چانسلرز اور اساتذہ مبارک باد کی مستحق ہیں۔گورنر پنجاب نے کہاکہ پینے کا گندہ پانی 50فیصد بیماریاں اور اموت کی وجہ بنتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تمام یونیورسٹیز کو چار چیلنجز دیئے ہیں۔ وزیر اعظم کی 10بلین ٹری پلانٹیشن کو حقیقت کا روپ دینا ہے، سٹوڈنٹس اور سٹاف کیلئے پینے کا صاف پانی مہیا کرنا ہے۔انہوں نے کہاکہ یورپ میں پاکستان کیلئے جی ایس ٹی پلس لیکر آنا میرے لئے اعزاز ہے جس کی بدولت پاکستان کو 15بلین ڈالر ملے۔ انہوں نے کہاکہ کل یورپین پارلیمنٹ میں کشمیر کے حق میں قرار داد منظور ہوگی اور بھارتی شہریت بل کو مسترد کردیا جائے گا اس قرار داد پر 154ممبر ز نے دستخط کردیئے ہیں اور یہ پاکستان کی بہت بڑا سفارتی کامیابی ہوگی۔ وائس چانسلر جی سی ویمن یونیورسٹی سیالکوٹ پروفیسر ڈاکٹر رخسانہ کوثر نے خطبہ استقبالیہ پیش کرتے ہوئے کہاکہ دوسرے کانووکیشن میں نیچرل سائنسز،ایڈمینسٹریٹو اینڈ مینجمنٹ سائنسز، آرٹس اور سوشل سائنسز کی کل 1233 طالبات کو اسناد،107 طالبات کورول آف آنر جبکہ25 طالبات کو گولڈ میڈلز،25 کو سلور میڈلز جبکہ ایم اے اسلامیات کی طالبہ عائشہ جمیل کومجموعی طور پربہترین کارکردگی پر علامہ اقبال گولڈ میڈل کے حقدار ٹھہرے۔گورنر پنجاب چودھری محمد سرور نے طالبات میں اسناد تقسیم کیں اور اْنھیں تمغوں سے بھی نوازا۔تقریب کے آخر میں ملک و قوم کے سلامتی اور استحکام کیلئے دعا کی گئی۔بعدازاں گورنر پنجاب چودھری محمد سرور نے ڈی سی آفس کا دورہ کیا اورضلع سیالکوٹ میں سرکاری اداروں کی کارکردگی اور ترقیاتی منصوبوں کا جائزہ لیا۔ ڈپٹی کمشنر سیالکوٹ ڈاکٹرناصر محمودبشیر نے گورنر کو سیالکوٹ میں ڈیجیٹل کمپلینٹ /انفارمیشن ٹریکنگ سسٹم، سینٹرلائز اٹنڈنٹس سسٹم فار ٹیچرز، نیا پاکستان ہاؤسنگ سکیم سیالکوٹ اور سب رجسٹرار آفس، کیلن ایند گرین چیمپئن پروگرام، پنجاب انٹر سٹیز ڈویلپمنٹ پروگرام، اراضی ریکارڈ سنٹر اور ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفیسسز کی خدمات کے معیار کو بہتر بنانے کیلئے آئی ایس او 9001سرئٹیفیکیشن بارے تفصیلی بریفنگ دی۔ڈی سی نے بتایا کہ ضلع سیالکوٹ میں 556سرکاری سکولوں میں سینٹرلائز اٹنڈنٹس سسٹم فار ٹیچرز لانچ کیا گیا ہے جس کے ذریعے اساتذہ کی آن ڈیوٹی اور آف ڈیوٹی بائیو میٹرک حاضری اور اس نظام کی بدولت اسسٹنٹ ایجوکیشن افسران رئیل ٹائم مانیٹرنگ کرسکیں گے جس سے سکولوں میں اساتذہ کی حاضری کو یقینی بنا کر معیار تعلیم کو بہتر بنایا جاسکے گا۔ نیا پاکستان ہاوسنگ اسکیم سیالکوٹ کے مجوزہ منصوبے بارے بریفنگ دی۔ گورنر پنجاب چودھری محمد سرور نے ضلع انتظامیہ کی جانب سے اقدامات پر اطمینان کا اظہار کیا۔ سیالکوٹ میں سب رجسٹرار، اراضی ریکارڈ سنٹر، ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفس میں سروسز کی معیار کو یقینی بنانے کیلئے آئی ایس 9001سرئٹیفیکیشن کے لئے یاداشت پر ڈی سی سیالکوٹ ڈاکٹر ناصر محمود بشیر نے متعلقہ فرم کے ساتھ دستخط کئے۔ بعد ازاں گورنر نے ضلعی اوورسیز آفس کا دورہ کیا جہاں پر چیئرمین ضلعی اوورسیز پاکستانی کمیٹی سیالکوٹ وقاص افتخار بٹ، ممبر صمد اللہ خان نے گورنر کو بتایا کہ 24جون سے کمیٹی کی بحالی سے لے کر اب تک کمیٹی کو مجموعی طور 555 شکایات موصول ہوئی جن میں سے 401کیسسز کو انصاف فراہم کیا گیا جبہ 154کیسسز زیر سماعت ہے۔ بعد ازاں گورنر پنجاب چودھری محمد سرور نے چیئرمین سی ایم کمپلینٹ سیل حسن سرفراز گھمن کے ہمراہ سی ایم کمپلینٹ سیل کے دفتر کا افتتاح کیا۔ بعد ازاں گورنر پنجاب چودھری محمد سرور نے پولیس خدمت سنٹر پولیس لائن کا بھی دورہ کیا۔ ڈی پی او کیپٹن (ر)مستنصر فیروز نے پولیس کی جانب سے عوام کیلئے کریکٹر سرٹیفیکیٹ، ڈرائیونگ لائسنس، ایف آئی آر کی نقل سمیت دیگر سہولیات کی فراہم کے بارے میں بریفنگ دی۔ علاوہ ازیں لاہور میں گور نر پنجاب سے تحریک انصاف افریقہ کے صدر شمریز احمد، چیئرمین وزیر اعلی شکایات سیل پنجاب زبیر خان نیازی، وائس چیئرمین لاہور عبیدالرحمن اور دیگر کی قیادت میں وفد نے ملاقات کی۔اس موقع پرچودھری سرور نے کہا ہے کہ بھارت کو متنازعہ شہریت قانون واپس لینا ہی پڑ ے گا جبکہ ؎ مسئلہ کشمیر بھی حل کر نے کے سوابھارت کے پاس کوئی اور راستہ نہیں۔انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ سمیت عالمی اداروں کی ذمہ داری ہے کہ وہ بھارت کی اس دہشت گردی اور انتہاپسندی پر خاموش تماشائی بننے کی بجائے ان کا سخت نوٹس لیں اور بھارت کو روکا جائے۔

گورنر پنجاب

مزید : ملتان صفحہ آخر