انتظامیہ غائب رحیم یار خان فلتھ ڈپو میں تبدیل عوامی شکایات پر فرضی دوروں کا انکشاف

انتظامیہ غائب رحیم یار خان فلتھ ڈپو میں تبدیل عوامی شکایات پر فرضی دوروں کا ...

  



رحیم یارخان(بیورو رپورٹ)لاکھوں نفوس پرمشتمل آبادی والاشہررحیم یارخان فلتھ ڈپوکی شکل اختیارکرگیا‘ میونسپل کارپوریشن حکام کی غفلت اورانتظامی کوتاہیوں کی وجہ سے شہری علاقے اوربازارسیوریج اورگندگی کے ڈھیروں کی آماجگاہ بن گیا‘ تفصیل کے مطابق رحیم یارخان شہرلاکھوں نفوس پرمشتمل ہے جومیونسپل کمیٹی سے آبادی بڑھنے کی وجہ سے میونسپل کارپوریشن کادرجہ توپاگیالیکن حالات ماضی سے ابترہوتے جارہے ہیں‘ (بقیہ نمبر51صفحہ7پر)

میونسپل کارپوریشن حکام اورعملہ ذاتی لوٹ مار میں مصروف ہوکرعوام کومسائل کی دلدل میں دھکیل رکھاہے‘ شہرکے گنجان آبادعلاقے جناح پارک‘ سیٹلائٹ ٹاؤن‘ حسن کالونی‘ شاہنوازکالونی‘ نیازی کالونی‘ اڈہ خانپور‘ عزیزآباد‘ بھٹہ کالونی‘ پیرشہیداں‘ گلشن اقبال‘ اقبال نگر‘ صادق بازار‘ شاہی روڈ‘ ریلوے چوک‘ ریلوے روڈ‘ مستان شاہ‘ نورے والی‘ ٹبی لاڑاں‘ محلہ قمرآباد‘ بستی امانت علی‘ علامہ اقبال ٹاؤن‘ عباسیہ ٹاؤن‘ پریس مارکیٹ‘ حبیب کالونی‘ظفرآباد‘ گلشن عثمان‘ گلشن عمر‘ قذافی کالونی‘ ٹرسٹ کالونی‘ زمیندارہ کالونی‘ بانوبازار‘ جدیدبازار‘ صدربازار‘ مسلم بازار‘ محلہ کانجواں‘ چک72این پی‘ حمیدٹاؤن‘ مڈدرباری‘ بستی حاجی احمد‘ کالونی حاجی احمد‘ ہسپتال روڈسمیت دیگرعلاقوں اوربازاروں بالخصوص شہرکے داخلی وخارجی مقامات جگہ جگہ گندگی کے ڈھیروں اورسیوریج کے پانی کی وجہ سے عذاب بنے ہوئے ہیں اورشہرمسائلستان بن چکاہے جبکہ میونسپل کارپوریشن حکام اورعملہ کام کرنے کی بجائے لوٹ مار میں مصروف ہے‘ عوامی شکایات پرکان دھرنے کی بجائے میونسپل کارپوریشن کے کرپٹ افسران واہلکاران نے سب کوماموں بناناشروع کیاہواہے‘ ضلعی انتظامیہ نے بھی عوامی شکایات پرفرضی دورے اورنوٹس لینے کے نام پربیوقوف بناناشروع کررکھاہے‘ ممبران اسمبلی اوران کے نمائندوں کی جانب سے متعددبارضلعی انتظامیہ کی میٹنگزمیں میونسپل کارپوریشن کی کارکردگی بہتربنانے پرزوردیالیکن کوئی شنوائی نہ ہوسکی‘ شہری وسماجی حلقوں نے وزیراعلی پنجاب عثمان بزداراورکمشنربہاولپورآصف اقبال چوہدری سے نوٹس لے کرہنگامی بنیادوں پرشہرکے بڑھتے مسائل حل کرنے کامطالبہ کیاہے۔

انکشاف

مزید : ملتان صفحہ آخر