نیب ترمیمی آرڈنینس کا اطلاق پرانے مقدمات پر نہیں ہوگا،نیب پراسیکیوٹر

نیب ترمیمی آرڈنینس کا اطلاق پرانے مقدمات پر نہیں ہوگا،نیب پراسیکیوٹر

  



لاہور(نامہ نگار) سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف کے خلاف پیپکو اورگیپکو میں غیر قانونی بھرتیوں کے کیس میں ملزموں کی بریت کی درخواست پر وکلاء کوحتمی دلائل کے لئے طلب کر تے ہوئے سماعت 3فروری تک ملتوی کردی۔احتساب عدالت کے امجد نذیر چودھری نے کیس کی سماعت کی،عدالتی حکم پرنیب نے مکمل جواب داخل کرا دیاہے،نیب کے پراسیکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ نیب ترمیمی آرڈنینس کا اطلاق پرانے مقدمات پر نہیں ہوگا،انہوں نے کہاکہ راجہ پرویز اشرف نے سیاسی فائدے کے لئے غیر قانونی بھرتیاں کیں،عدالت راجہ پرویز اشرف کی بریت کی درخواست پہلے ہی مسترد کرچکی ہے،راجہ پرویز اشرف کی بریت کی دوسری درخواست کو بھی مسترد کیا جائے، راجہ پرویز اشرف کے وکیل سابق اٹارنی جنرل عرفان قادر نے کہا کہ اس کیس میں کرپشن کا کوئی عنصر موجود نہیں،عدالت نے ملزموں کی بریت کی درخواست پر مزید سماعت آئندہ تاریخ پیشی تک ملتوی کرتے ہوئے وکلاء کوحتمی دلائل کے لے طلب کرلیاہے۔

نیب ترمیمی بل

مزید : صفحہ آخر