پیراگون سکینڈل، خواجہ برادران کے جوڈیشل ریمانڈ میں 13روز توسیع

    پیراگون سکینڈل، خواجہ برادران کے جوڈیشل ریمانڈ میں 13روز توسیع

  



لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج جوادالحسن نے پیراگون ہاؤسنگ سکینڈل کیس میں خواجہ برادران کے جوڈیشل ریمانڈ میں 13روز کی توسیع کرتے ہوئے آئندہ تاریخ سماعت پر خواجہ برادران کے وکلا ء کو بحث کے لئے طلب کرلیاہے،عدالت نے نیب کی جانب سے سوسائٹی کی زمینوں کا اصل ریکارڈ طلب کرنے کی درخواست پر بھی نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیاہے۔گزشتہ روز مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے خواجہ سعد رفیق اور ان کے بھائی ایم پی اے خواجہ سلمان رفیق کو جوڈیشل ریمانڈ مکمل ہونے پر عدالت میں پیش کیا گیا،عدالت نے استفسار کیا کہ پیراگون سوسائٹی کے مدعی کون ہیں؟ عدالت نے قراردیا کہ تفتیشی اور وکیل مطمئن نہیں کر پا رہے،کیوں نہ چیئرمین کو طلب کرلیاجائے،نیب کے وکیل نے عدالت کوبتایا کہ عدالتی حکم پر وعدہ معاف گواہ قیصر امین بٹ سے ملاقات کی گئی ہے۔ عدالت نے سوسائٹی کی زمینوں کا اصل ریکارڈ طلب کرنے کی درخواست پر ملزمان کو نوٹسز جاری کرتے ہوئے خواجہ برادران کے جوڈیشل ریمانڈ میں 11فروری تک توسیع کردی۔ دوران سماعت عدالت نے ریمارکس دیئے کہ تفتیشی نے جہالت کا مظاہرہ کیا سب فوٹو کاپیاں لگا رکھی ہے، پراسیکیوٹر نیب نے کہا کہ قیصر امین بٹ کی حالت خراب ہے،تفتیشی نے خود وزرٹ کیا ہے، عدالت نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے رپورٹ تفتیشی افسر کو واپس کر دی،پیرا گون سٹی کے وکیل نے کہا کہ پیراگون کی پراپرٹی پر سٹے لگا ہوا ہے،اسے ختم کیا جائے، جس پر فاضل جج نے کہا کہ درخواست 12 دن میں آنی چاہیے تھی، آپ 12 سال بعد آرہے ہیں۔

جوڈیشل ریمانڈ

مزید : صفحہ آخر