واٹر سکیمز کی پانی کی ٹیسٹنگ اور واٹر ٹینکیو کی صفائی باقاعدگی سے کیجائے‘ معاون آبنوشی ریاض

واٹر سکیمز کی پانی کی ٹیسٹنگ اور واٹر ٹینکیو کی صفائی باقاعدگی سے کیجائے‘ ...

  



پشاور (سٹاف رپورٹر)وزیر اعلیٰ کے معاون خصوصی برائے آبنوشی ریاض خان نے ھدایات دیتے ہوئے کہا کہ واٹر سکیمز کی پانی کی ٹیسٹنگ اور واٹر ٹینکیوں کی صفائی باقاعدگی سے کی جائے اور پانی کے غیر قانونی کنکشنز کی رجسٹری سمیت ہدف شدہ ریونیوکی وصولی کو آئندہ دو مہینے کے اندر اندر یقینی بنایا جائے اور پیش رفت سے متعلق انہیں آگاہ کیا جائے۔ یہ ہدایات انہوں نے بدھ کے روز پشاور میں محکمہ آبنوشی کی مردان،سوات اور مینگورہ۔ ملاکنڈ سرکلز کی کارکردگی کے بارے میں منعقدہ بریفنگ کے دوران دیں۔ اجلاس میں سیکرٹری محکمہ آبنوشی انجینئربہرہ مند خان،چیف انجینئر عبد السمیع اور متعلقہ سرکلز کے سپرنٹینڈنٹ انجینئرز نے بھی شرکت کی۔ اس موقع پر معاون خصوصی نے کہا کہ واٹر سکیمز کی پانی کی ٹیسٹنگ اور واٹر ٹینکیوں کی صفائی باقاعدگی سے کی جائے اور پانی کے غیر قانونی کنکشنز رجسٹری سمیت ہدف شدہ ریونیوکی وصولی کو آئندہ دو مہینے کے اندر اندر کو یقینی بنایا جائے۔انہوں نے کہا کہ سٹاف کی حاضری میں بلاوجہ کسی سے بھی رعایت نہ کی جائے اور پوسٹنگ ٹرانسفر میں کوئی سیاسی دباؤ قبول نہ کیا جائے۔انہوں نے ہدایات کی کہ پانی کی تمام سکیمز سے پانی کی فراہمی چوبیس گھنٹے یقینی بنانے کے ساتھ پانی کے بل بھی ریگولر کسٹمرز کو بھیج دیں اور جاری سکیموں کو جلد از جلد مکمل کیا جائے۔ ریاض خان نے متعلقہ افسران کو ہدایت کی کہ سکیموں کی ٹینڈرنگ اور مرمتی کام میں شفافیت کو بھی یقینی بنایا جائے انہوں نے یہ بھی کہا کہ کسی قسم کی کرپشن برداشت نہیں کی جائیگی اور جو بھی اس کا مرتکب پایا گیا اسکے خلاف انضباطی کاروائی عمل میں لائی جائیگی۔ ریاض خان نے تمام افسران کو آگاہ کیا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کی کرپشن کے حوالے سے زیرو ٹالرنس کی پالیسی ہے اور جس افسر کو بھی کرپشن اور عوام کو خدمات کی فراہمی میں غفلت کا مرتکب پایا گیا اسکے ساتھ کوئی رعایت نہیں کی جائیگی۔ اس موقع پرمعاون خصوصی نے کہا کہ عوام کی خدمات دل کھول کر کریں تاکہ آبنوشی کا محکمہ پورے صوبے میں مثالی محکمہ بنے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر