لیڈی بوم بوم کہلانا جارحانہ بیٹنگ کرنے کا حوصلہ دیتا ہے، ندا ڈار

لیڈی بوم بوم کہلانا جارحانہ بیٹنگ کرنے کا حوصلہ دیتا ہے، ندا ڈار

  



لاہور(آئی این پی)پاکستان ویمن کرکٹ ٹیم کی آل راؤنڈر ندا ڈار نے کہا ہے کہ پاکستان کی بہترین آل راونڈر بننا چاہتی ہیں، لوگ جارحانہ انداز کی وجہ سے لیڈی بوم بوم کہتے ہیں اور یہ ٹائٹل مجھے ہر بار جارح انداز میں بیٹنگ کرنے کا حوصلہ دیتا ہے۔کراچی میں میڈیا سے گفتگو میں ندا ڈار نے کہا کہ پچھلے دنوں ان کی فارم خراب ضرور تھی لیکن کیمپ میں انہوں نے کافی محنت کی اور اب وہ اسکور بورڈ پر رنز سجانے کے لیے تیار ہیں، امید ہے کہ ورلڈ کپ میں اچھا پرفارم کریں گی۔انہوں نے کہا کہ اگر انہیں موقع ملا تو وہ ٹی ٹوئنٹی میں تیز ترین ففٹی کا ریکارڈ بھی اپنے نام کرلیں گی۔

خیال رہے کہ ندا ڈار اس وقت پاکستان کی جانب سے تیز ترین ففٹی کا ریکارڈ رکھتی ہیں، انہوں نے 20گیندوں پر نصف سنچری اسکور کی جب کہ عالمی ریکارڈ 18گیندوں پر سنچری کا ہے۔ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ وہ ہمیشہ ہی شاہد آفریدی کی مداح رہی ہیں اور ان کو دیکھ کر ہی جارح مزاج بلے بازی کو اپنایا، جب شاہد آفریدی نے ان کی تعریف کی تھی تو بہت اچھا لگا تھا۔33سالہ ندا ڈار 74ایک روزہ اور 98ٹی ٹوئنٹی میچز میں پاکستان کی نمائندگی کرچکی ہیں اور ان کا اگلا اسائنمنٹ آسٹریلیا میں آئی سی سی ویمن ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ ہے۔ ندا ڈار ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں آل رانڈ کارکردگی دکھا کر ٹیم کو سرخرو کرانا چاہتی ہیں۔ ایک سوال پر ندا ڈار نے کہا کہ آسٹریلیا میں بیگ بیش لیگ کھیلنا ان کے لیے کافی مفید ثابت ہوا ہے اور جو تجربہ انہوں نے حاصل کیا اس سے نہ صرف انہیں بلکہ ٹیم کو بھی فائدہ ہوگا۔

خبرنمبر 159………… 29 جنوری 2020ء…………

مزید : کھیل اور کھلاڑی