شیخ رشید کا دعوی غلط نکلا، گیس سلنڈر دھماکہ نہیں، شارٹ سرکٹ سانحہ تیز گام کا سبب بنا

شیخ رشید کا دعوی غلط نکلا، گیس سلنڈر دھماکہ نہیں، شارٹ سرکٹ سانحہ تیز گام کا ...

  



کراچی(سٹاف رپورٹر، نیوز ایجنسیاں)سانحہ تیزگام کی انکوائری رپورٹ نے وزیر ریلوے شیخ رشیدکا دعویٰ جھوٹا ثابت کر دیا۔ 30اکتوبر کو ہونیوالا حادثہ گیس سلنڈر پھٹنے سے نہیں،شارٹ سرکٹ کے باعث ہوا۔تفصیلات کے مطابق چیف ایگزیکٹواور سابق وفاقی انسپکٹر ریلویز دوست علی لغا ری کی جانب سے تیزگام حادثے کی انکوائری رپورٹ مرتب کی گئی ہے جس میں انکشاف کیا گیا کہ 30اکتوبر کو ہونیوالا حادثہ گیس سلنڈر پھٹنے سے نہیں بلکہ شارٹ سرکٹ کی وجہ سے ہوا،ٹرین میں آگ کچن پورشن میں الیکٹریکل کیٹل کی ناقص وائرنگ کی وجہ سے لگی،12نمبر بو گی میں الیکٹرک سپلائی بوگی نمبر 11سے غیر قانونی طریقے سے لی گئی تھی اور تار میں ناقص جوڑ اور ہیٹ اپ ہونے کی وجہ سے شارٹ سر کٹ ہوا۔انکوائری رپورٹ میں کہا گیاہے شارٹ سرکٹ ہونے سے دروازے کے پاس پڑے مسافروں کے سامان میں آگ لگی اور وا ئرنگ متاثر ہونے سے پوری بوگی میں شدید دھواں بھر گیا،آگ نے بوگی نمبر12 کی تمام وائرنگ کو اپنی لپیٹ میں لے لیا، بوگی میں مسا فروں کے سامان کیساتھ گیس سلنڈر بھی موجود تھا،ٹرین میں آگ بجھانے والی آلات کی کمی کے باعث موقع پر قابو نہیں پایا جا سکا۔انکوائری رپورٹ میں ڈپٹی ڈی ایس، کمرشل آفیسر، ایس ایچ او، ڈائننگ کار کے ٹھیکیدار، ویٹرز،ہیڈ کانسٹیبل، ریزرویشن سٹاف کو حا د ثے کا ذمہ دار قر ار دیا گیا ہے،ذمہ داروں میں ڈائننگ کار کے منیجر ایم آصف، ویٹر عبدالستار، افتخار احمد،ہیڈکانسٹیبل علی جان،ایم نسیم، کا نسٹیبل ایم ارشد، جہا نگیر حسین، ریزرویشن سٹاف عامر حسین شامل ہیں،اس کے علاوہ ڈپٹی ڈی ایس کراچی جمشید عالم، ڈویژنل کمرشل آ فیسر جنید اسلم، ریزر و یشن کلرک ایم ندیم،ایس ایچ او حیدر آباد طارق علی لغاری، ایس ایچ او خانپور امداد علی پر بھی حادثے کی ذمہ دار ی عائد کی گئی ہے۔انکوائری ر پو رٹ میں بتائے گئے ذمہ داروں کو پہلے ہی عہدوں سے ہٹایا جا چکا ہے جبکہ سیکرٹری ریلوے حبیب الرحمن گیلانی نے انکوائری رپورٹ کی منظوری دیدی ہے۔واضح رہے 30اکتوبر2019کو کراچی سے راولپنڈی جانیوالی تیز گام ایکسپریس میں آگ بھڑ کنے کے نتیجے میں 76مسافر جاں بحق اور 90سے زائد زخمی ہوگئے تھے۔

سانحہ تیز گا م

مزید : صفحہ اول