”پولیس کے اعلیٰ معیار کیلئے اچھے پولیس افسروں کا ہونالازم ہے“سندھ ہائیکورٹ نے ڈی آئی جی خادم حسین اور ایس پی ڈاکٹر رضوان کے تبادلوں سے متعلق کیس کاتفصیلی فیصلہ جاری کردیا

”پولیس کے اعلیٰ معیار کیلئے اچھے پولیس افسروں کا ہونالازم ہے“سندھ ہائیکورٹ ...
”پولیس کے اعلیٰ معیار کیلئے اچھے پولیس افسروں کا ہونالازم ہے“سندھ ہائیکورٹ نے ڈی آئی جی خادم حسین اور ایس پی ڈاکٹر رضوان کے تبادلوں سے متعلق کیس کاتفصیلی فیصلہ جاری کردیا

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)سندھ ہائیکورٹ نے ڈی آئی جی خادم حسین اور ایس پی ڈاکٹر رضوان کے تبادلوں سے متعلق کیس کا 18 صفحات پر مشتمل تفصیلی فیصلہ جاری کردیا۔

تحریری فیصلے میں کہا گیا ہے کہ پولیس کے اعلیٰ معیار کیلئے اچھے پولیس افسروں کا ہونالازم ہے،سفارش اورمن پسند افسروں کی تعیناتی سے خودمحکمہ پولیس میں غیریقینی پیداہوگی،پولیس افسروں کی سفارش پسندنہ پسند پر تبادلے سے محکمہ بہتر نہیں ہوتا،عدالت کافیصلے میں کہنا ہے کہ بہترکارکردگی کیلئے پولیس افسروں کی تقرری میرٹ پر ہوناضروری ہے۔

فیصلے میں کہاگیا ہے کہ ایسے پولیس افسرہوں جو طاقتورکیساتھ عام شہریوں سے بھی اچھابرتاﺅ کریں ،اگرپولیس میں بے یقینی ہو گی توخمیازہ عوام کو ہی بھگتناپڑے گا،عدالت کاکہنا ہے کہ لوگوں کے جان ومال کی حفاظت ریاست کی بنیادی ذمہ داری ہے،پولیس افسروں کیلئے اچھاپولیس افسرکے ساتھ اچھا شہری ہونابھی لازم ہے،ایک پولیس افسراچھا ،بہتراخلاق،اچھارویہ اورایماندارہوناچاہئے،فیصلے میں کہاگیا ہے کہ ضروری نہیں ناانصافی پر وہی پولیس افسر انصاف کا دروازہ کھٹکھٹائے۔

مزید : قومی /علاقائی /سندھ /کراچی