عمران خان کو حوریں نظرآگئیں لیکن پی پی اور ن لیگی قیادت کو کیوں نظرنہیں آسکتیں؟عثمان ڈار نے حیران کن بات کہہ دی

عمران خان کو حوریں نظرآگئیں لیکن پی پی اور ن لیگی قیادت کو کیوں نظرنہیں ...
عمران خان کو حوریں نظرآگئیں لیکن پی پی اور ن لیگی قیادت کو کیوں نظرنہیں آسکتیں؟عثمان ڈار نے حیران کن بات کہہ دی

  



کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)گزشتہ دنوں دورہ کراچی کے دوران وزیراعظم کا دیا گیا ایک بیان ابھی تک زبان زدعام ہے، عمران خان نے کہا تھا کہ دوہزار تیرہ کی انتخابی مہم کے دوران جب وہ لفٹ سے گر کر ہسپتال پہنچے تو شوکت خانم ہسپتال کے ایک ڈاکٹر نے انہیں ایسا انجکشن لگایا کہ نرسز انہیں حوریں لگنے لگیں۔

وزیراعظم کے اس بیان پر انہیں سوشل میڈیا پربھی ٹرول کیا گیا جبکہ اپوزیشن جماعتوں نے بھی طنز کے نشتر چلائے۔ گزشت شب جیو نیوز کے پروگرام ’آپس کی بات ‘میں گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی عثمان ڈار نے کہا حوریں صرف نیک لوگوں کو نظر آتی ہیں پیپلزپارٹی اور نون لیگ کے رہنماوں کو حوریں کبھی نظر نہیں آئیں گی۔

عثمان ڈار نے یہ بات اس جملے کے جواب میں کہی جس میں پیپلز پارٹی کی پلوشہ نے کہا کل کو عمران خان اپنی ساری باتوں کو ٹیکے کا اثر قرار دے دیں گے اور کہیں گے انہیں کچھ یاد نہیں کہ انہوں نے کیا کہا۔اقوام متحدہ میں کون سا ٹیکہ لگا ہواتھا؟۔

اس دوران ڈاکٹر طارق فضل چودھری نے کہا وہ پانچ سال شعبہ طب میں ملازمت کرتے رہے ہیں تاہم میڈیکل میں ایسا کوئی ٹیکہ نہیں ہے جو حوریں دکھاتا ہو،جس پر عثمان ڈار نے جواب دیا کہ ہر اس شخص کو حوریں نظر آئی گی جو نیک اور ایماندارہو گا معذرت کے ساتھ ان دونوں کی لیڈرشپ میں ایسی کوئی خصوصیت نہیں ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس