’’ عمران خان اِس چیز میں بڑے ماہر ہیں اور ہم اُن کا مقابلہ نہیں کر سکتے۔۔۔‘‘شہباز شریف نے ایسا اعتراف کرلیاکہ وزیر اعظم بھی پریشان ہو جائیں گے

’’ عمران خان اِس چیز میں بڑے ماہر ہیں اور ہم اُن کا مقابلہ نہیں کر ...
’’ عمران خان اِس چیز میں بڑے ماہر ہیں اور ہم اُن کا مقابلہ نہیں کر سکتے۔۔۔‘‘شہباز شریف نے ایسا اعتراف کرلیاکہ وزیر اعظم بھی پریشان ہو جائیں گے

  



لندن(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے  کہا ہے کہ ڈیلی میل نے پچھلے سال من گھڑٹ سٹوری چھاپی یا چھپوائی گئی ،اس  کردار کشی کا حصہ ہےجوعمران خان نیازی دن رات لگے ہوئے ہوئے اپوزیشن کے 

خلاف اورخصوصا مسلم لیگ ن کے  خلاف ،عمران خان نیازی وہ کچھ  نہیں کر سکے  مسلم لیگ ن کے مقابلے میں سیاسی  ڈیلیور کرنےکے میدان میں ،عمران خان نیازی جب سےکرکٹ سے ریٹائرڈ ہوئے ہیں وہ ایک چیز میں ایکسپرٹ ہیں اور  وہ ہے جھوٹ بولنااوریوٹرنز  لینا ،اِس میں ہم اُن کامقابلہ نہیں کر سکتے،عمران خان ڈیلیور نہیں کرسکتے، صرف من گھڑت  الزام تراشی میں ماہر ہیں۔

نجی ٹی وی کےمطابق شہبازشریف نےبرطانوی اخبار’’ڈیلی میل ‘‘اور  ڈیوڈ روز  کےخلاف لندن ہائی کورٹ میں مقدمہ دائر کرنے کےبعد پریس کانفرس   کرتے ہوئے کہا کہ یہ کوئی طریقہ  نہیں ہے کہ عمران خان نیازی پاکستان کی ساکھ کو نقصان  پہنچانے کے لئےمسلم لیگ ن پردن رات الزام تراشی کرتے رہیں اورہم خاموش   ہو جائیں،ڈیلی میل میں میرے خلاف من گھڑت  سٹوری چلا کر میری ساکھ کو نقصان پہنچانے کی کوشش کی گئی ،من گھڑت خبر عمران خان کی ایما اور ہدایت پر چلائی گئی، بےبنیادکہانی میں کوئی صداقت نہیں,اگر میرے خلاف لگائے گئے الزامات میں کوئی حقیقت ہوتی یا کوئی شواہد موجود ہوتے تو یہ کورٹ میں لے جاتے اور دنیا کو بتاتے کہ خدانخواستہ شہبازشریف نے زلزلہ زدگان کے لیے جمع کیے گئے فنڈز کا پیسہ چرایا ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ 2005 کے زلزلے کے بعد بحالی کے منصوبوں میں برطانوی ٹیکس دہند گان کا پیسہ نا جائز طور پر استعمال کرنے کا الزام بے بنیاد اور سراسر جھوٹ ہے،میں ایسے بے بنیاد الزامات کی واضح اور سختی کے ساتھ تردید کرتا ہوں، ڈیلی میل کی خبر پاکستان اور برطانیہ کے درینہ تعلقات خراب کرانے اور ڈونرز کی طرف سے پاکستان کو ملنے والی امداد بند   کرانے  کی سازش ہے،پاکستان ایک عظیم ملک ہے اور ہماری پہچان پاکستان ہے،مجھے فخر ہے کہ برطانیہ نے تعلیم اورصحت کے میدان میں پاکستان کی بے پناہ مدد کی ۔اُنہوں نے کہا کہ میرےخلاف ڈیلی میل میں جھوٹی خبرعمران خان نیازی کی ہدایت پر چھاپی گئی اور عمران نیازی کےچاپلوس شہزاد اکبر نے ان کی ہدایت پر من وعن عمل کیا, آج میں نےوہ شہزاد اکبر کے18 سوالوں کے جواب دے دیئے ہیں, میں نے  اللہ تعالیٰ کی مہربانی سے حقائق کے سہارے لندن ہائی کورٹ میں مقدمہ دائر کیا ہے ،جہاں دودھ کا دودھ اور پانی کا  پانی ہو  جائے گا ۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان اوران کی حکومت اپوزیشن کے پیچھے پڑی ہوئی ہے،اگرڈیلی میل کی کہانی میں صداقت ہوتی تونیب اس پرنوٹس لیتی،ہائی  کورٹ میں میری ضمانت  کے موقع پرعدالت نے کہا نیب بتائے شہبازشریف نےکہاں کرپشن کی؟عمران  نیازی اور  نیب گٹھ جوڑ‘‘ نہ ہوتا تومیرے خلاف آشیانہ کیس نہ بنتا،

اگر میں نے زلزلہ متاثرین کی امداد میں  ایک دھیلے کی کرپشن کی ہوتی تو کیایہ ڈیلی میل میں سٹوری چھپواتے ؟ کیا پھر ’’نیب  نیازی گٹھ  جوڑ ‘‘ میرے خلاف آشیانہ  کا کیس بناتے ؟لاہور ہائیکورٹ میں میری ضمانت ان کے منہ پر ایک طمانچہ ہے،یہ اللہ تعالی کا کرم ہے۔میاں شہباز شریف کا کہنا تھا کہ عمران خان جب سےوہ کرکٹ سے ریٹائرڈ ہوئے ہیں وہ ایک چیز میں ایکسپرٹ ہیں اور  وہ ہے جھوٹ بولنا،من گھڑت الزام تراشی کرنا اوریوٹرنز اِس میں ہم اُن کامقابلہ نہیں کر سکتے،ہم 

دروغ گوئی میں بھی عمران خان کا مقابلہ نہیں کرسکتے ہیں،عمران خان ڈیلیور نہیں کرسکتے، صرف الزام تراشی میں ماہر ہیں،ڈیلی میل کی سٹوری میری اور میرے  خاندان کی سیاسی ساکھ اور کردار کو مسخ کرنے کے لیے گھڑی گئی جس کے پس منظر میں پاکستان کی موجودہ حکمران قیادت کا ہاتھ ہے۔

جب  سےٹرانسپرسی انٹرنیشنل کی رپورٹ آنے کے بعدعمران خان نیازی اور  ان کے ساتھیوں کا حال ’’چور مچائے شور‘‘ والا ہے،ٹرانسپرسی انٹرنیشنل کے پاکستانی چیپٹر  سےوضاحت   چھپوائی گئی۔

مزید : قومی