کیا چینی شہر ووہان میں پھنسے ہوئے پاکستانی طلبا کو نکالا جائے گا؟حکومت نے واضح اعلان کردیا

کیا چینی شہر ووہان میں پھنسے ہوئے پاکستانی طلبا کو نکالا جائے گا؟حکومت نے ...
کیا چینی شہر ووہان میں پھنسے ہوئے پاکستانی طلبا کو نکالا جائے گا؟حکومت نے واضح اعلان کردیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہا ہے کہ پاکستان، خطے اور دنیا کے مفاد میں یہی بہتر ہے کہ ہم لوگوں کو وہاں سے نہ نکالیں۔ان کا کہنا تھا کہ آج کل سوشل میڈ یا کا دور ہے اور چین سے کچھ ویڈیوز آرہی ہیں جن میں پاکستانی طلبا وطن واپسی کے لیے حکومت کی طرف دیکھ رہے ہیں ،کورونا وائرس سے متاثرہ شہر ووہان میں کئی پاکستان طلبہ موجود ہیں جن میں 4 طلبہ میں مہلک وائرس کی تصدیق ہوئی ۔ان کا کہنا تھا کہ امریکا نے اب تک ویانا کنونشن کے مطابق صرف سفارتکاروں کو ہی نکالا ہے لیکن ضروری ہے کہ ہم چین کی پالیسی کے ساتھ چلیں اور اس بیماری کے پھیلاو¿ کا باعث نہ بنیں۔

میڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ چین میں کورونا وائرس سے خوفزدہ پاکستانیوں کو نکالے جانے کے امکانات کو یہ کہہ کر ختم کردیاکہ پاکستان، خطے اور دنیا کے مفاد میں یہی بہتر ہے کہ ہم لوگوں کو وہاں سے نہ نکالیں، چین میں اِس بیماری کی سب سے بہترین تشخیص ہوسکتی ہے۔ عالمی ادارہ صحت نے 194 ممبر ممالک کو ہدایت کی ہے کہ کوئی ملک چین سے اپنے باشندوں کو نہ نکالے، اس کا مطلب ہے کہ حکومت چین نے ووہان تک اس وائرس کو محدود کیا ہوا ہے، اگر شہریوں کو مختلف ممالک نکالیں گے تو وائرس کے دنیا بھر میں پھیلنے کا خدشہ ہے۔

مزید : قومی