مریم نواز خاموش کیوں ہیں اور وہ کب سیاست میں حصہ لیں گی؟خواجہ آصف نے ایسی بات کہہ دی کہ شہباز شریف بھی حیران رہ جائیں گے

مریم نواز خاموش کیوں ہیں اور وہ کب سیاست میں حصہ لیں گی؟خواجہ آصف نے ایسی ...
مریم نواز خاموش کیوں ہیں اور وہ کب سیاست میں حصہ لیں گی؟خواجہ آصف نے ایسی بات کہہ دی کہ شہباز شریف بھی حیران رہ جائیں گے

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان  مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما اور سابق وزیرخارجہ خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ پارٹی میں کوئی کنفیوژن نہیں، سب کو پالیسی معلوم ہے جو تاثر دیا جا رہا ہےایساکچھ نہیں،پورے پاکستان کومعلوم ہے کہ حکومت کارکردگی نہیں دکھا رہی،میرا سیاسی طور پر دفاعی ادارے سے کوئی رابطہ نہیں ہوا، شاہد خاقان عباسی کے ساتھ جھگڑے بات نہیں کرنا چاہتا،ن لیگ میں بہت سےلوگ میرے طرز سیاست کی حمایت نہیں کرتے،نوازشریف کی واپسی کی تاریخ کوئی نہیں دےسکتا،مریم نواز دوبارہ سیاست کریں گی لیکن اس وقت خاموشی کی ضرورت ہے۔

 نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما خواجہ آصف نے کہا کہ پارٹی میں کوئی کنفیوژن نہیں، سب کو پالیسی معلوم ہے جو تاثر دیا جا رہا ہے ایسا کچھ نہیں، پارٹی کی پالیسی واضح ہے، پورے پاکستان کو معلوم ہے کہ حکومت کارکردگی نہیں دکھا رہی،ہماری زیادہ توجہ حکومت کی ناکامی کی طرف ہوتی ہے۔انہوں نے کہا کہ آٹا،چینی بحران پر ایوانوں میں بھرپور آواز اٹھائی جائے گی، فردوس عاشق اعوان جیسے غیر منتخب لوگ جو مرضی کہیں اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا، غیر منتخب لوگوں نے اپنی دکان بھی چلانا ہوتی ہے۔انہوں نے کہا کہ میں بھی اعتزاز احسن کے بارے میں بہت کچھ کہہ سکتا ہوں لیکن کہنا نہیں چاہتا، اعتزاز احسن کی پارٹی کے لئے لحاظ سے اہمیت نہیں ان کے بیان کا میں کیا جواب دوں۔انہوں نے کہا کہ دفاعی اداروں کا بطور وزیر احترام کرتا تھا آج بھی کرتا ہوں، میرا سیاسی طور پر دفاعی ادارے سے کوئی رابطہ نہیں ہوا۔انہوں نے کہا کہ شاہد خاقان عباسی کے ساتھ جھگڑے کے حوالےسے کوئی بات نہیں کرنا چاہتا، (ن) لیگ میں بہت سے لوگ میرے طرز سیاست کی حمایت نہیں کرتے، پارٹی قیادت جو کہے میری مرضی نہ ہو پھر بھی قیادت کا حکم پورا کروں گا، بل کی حمایت کرنے پر (ن) لیگ کو کوئی دھچکا نہیں لگا، میں اپنے حلقے کی بنیاد پر کہہ سکتا ہوں اس کا کوئی منفی اثر نہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمیں کوئی سطح پر ڈائیلاگ کی ضرورت ہے، احساس محرومی والوں کی مرہم پٹی سیاستدانوں کا کام ہے، اکبر بگٹی کے بعد بلوچستان والوں میں تنہائی کا احساس بڑھا ہے، پارلیمنٹ کو پرسکون چلانا پارلیمنٹرینز کا ایجنڈا ہونا چاہیے، حکومت کی بھی ذمہ داری ہوتی ہے کہ وہ پارلیمان کو پرسکون طریقے سے چلائے۔

خواجہ آصف نےکہاکہ نوازشریف کی واپس کی تاریخ کوئی نہیں دےسکتا البتہ شہبازشریف دو ماہ سے پہلے ہی واپس آجائیں گے، مریم نواز کے باہر جانے کا انحصار عدالت پر ہے، ہماری خواہش ہے کہ مریم نواز والد کے پاس لندن جائیں، مریم دوبارہ سیاست کریں گی لیکن اس وقت خاموشی کی ضرورت ہے، نوازشریف کی صحت کی وجہ سے مریم نواز خاموش ہیں۔ انہوں نے کہا کہ لندن فلیٹس 1992-93میں خریدے گئے تھے،شریف خاندان 1992-93سے ہی ان فلیٹس میں رہائش پذیر ہیں،اس سے  ظاہر ہوتا ہے کہ ان کا فلیٹس سے کوئی تو تعلق ہے۔

مزید : قومی