مضر صحت چینی فروخت کرنیکا انکشاف، ریٹ بڑھنے کا امکان

 مضر صحت چینی فروخت کرنیکا انکشاف، ریٹ بڑھنے کا امکان

  

کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر) گر مافیا   مزید بھاری منافع کمانے کی خاطر مبینہ طور پر غیر ملکی مضرصحت   چینی لوکل چینی میں مکس کرکے انتہائی غیرمعیاری چینی مارکیٹ میں سپلائی کر کے غریب صارفین لوٹنے کیلئے سرگرم ذرائع کے مطابق مقامی چینی میں بھی 3نمبر مکس کرکے غریب عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹا جارہا ہے اور موٹی چینی اوپن مارکیٹ سے غائب کر دی گئی ہے، باوثوق ذرائع کے مطابق بااثر شوگرملز اونرز مقامی دانے دار موٹی چینی بڑے پیمانے پر سٹا ک کر رہے ہیں (بقیہ نمبر45صفحہ6پر)

 تاکہ آنے والے دنوں میں ملکی مارکیٹ میں مہنگے داموں فروخت یا غیر ممالک چینی کی بھاری کھیپ برآمد کی جاسکے، ظلم کی انتہا ملکی و غیر ملکی  مکس شدہ چینی جس میں مٹھاس نہ ہونے کے برابر ہے اور موٹی چینی  سے بھی بہت زیادہ مقدار میں استعمال کرنا پڑتی ہے، گنے کا کرشن سیزن جاری ہونے کے باوجود ظالمانہ حد تک ایک سو روپے فی کلو فروخت کی جارہی ہے اور ملاوٹ شدہ جان لیوا چینی ریکارڈ  نرخ میں ایک سو روپے کلو فروخت کرکے متوسط طبقے کا معاشی قتل عام کیا جا رہا ہے، تاہم متعلقہ ادارے چینی میں مبینہ ملاوٹ اور ناجائز منافع خوری اور ذخیرہ اندوزی کا کوئی نوٹس نہیں لے رہے، دوسری طرف تاجر برادری اور دکانداروں کا موقف ہے کہ شوگر ملوں والے جو چینی کھلی مارکیٹ میں سپلائی کرتے ہیں ہم تو وہی بیچنے پر مجبور ہے، دریں اثناء متاثرہ صارفین نے ارباب اختیار سے مطالبہ کیا کہ اوپن مارکیٹ میں فروخت ہونے والی ملاوٹ شدہ چینی پر پابندی عائد کی جائے اور مارکیٹ میں مقامی شوگر ملوں کی تیار کردہ نئی دانے دار اور موٹی چینی کی فروخت کو یقینی بنایا جائے اور عوام الناس کو ناقص ترین مہلک چینی کی بیماریوں سے بچایا جائے۔

امکان

مزید :

کامرس -