’اسلام آباد میں موجود چینی فیملی چمگادڑ پکارہی ہے جس سے کورونا پھیلنے کاخدشہ ہے‘سوشل میڈیا صارف کا دعویٰ لیکن دراصل وہ کیا چیز تھی؟ حیران کن خبر آگئی 

’اسلام آباد میں موجود چینی فیملی چمگادڑ پکارہی ہے جس سے کورونا پھیلنے ...
’اسلام آباد میں موجود چینی فیملی چمگادڑ پکارہی ہے جس سے کورونا پھیلنے کاخدشہ ہے‘سوشل میڈیا صارف کا دعویٰ لیکن دراصل وہ کیا چیز تھی؟ حیران کن خبر آگئی 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی دارالحکومت کے ایک مکین نے سوشل میڈیا کے ذریعے انتظامیہ سے شکایت کی کہ ان کی پڑوسی چینی فیملی چمگادڑ پکارہی ہے جس کی وجہ سے کورونا وائرس پھیل سکتا ہے ، ضلعی انتظامیہ ، محکمہ صحت اور پولیس کو ایکشن لینا چاہیے ، اس پوسٹ پر متعلقہ محکمے فوری حرکت میں آئے اور متعلقہ حکام کو گھر سے چمگادڑ کی جگہ بھنا ہوا مرغ اور تار پر لٹکی مچھلی ملی ۔ 

گلف نیوز کے مطابق اسلام آباد وائلڈ لائف منیجمنٹ بورڈ اور ضلعی انتظامیہ کی مشترکہ ٹیم نے چینی فیملی کے زیراستعمال گھر کا دورہ کیا ، جس دوران تمام دعوے غلط ثابت ہوئے اور چمگادڑ قرار دی گئی چیز دراصل مچھلی اور چکن نکلا۔ 

ڈی سی اسلام آباد حمزہ شفقات نے تصدیق کی کہ ٹیمیں کوبھیجاگیا اور یہ مچھلی اور بھونا ہوا چکن تھا۔ان کا مزید کہناتھاکہ شیئرکی گئی تصویر میںواضح طورپر دیکھا جاسکتاہے کہ یہ چمگادڑ نہیں ہے۔

منیجمنٹ بورڈ کے منیجر آپریشنز سخاوت ناز نے بتایا کہ گوشت کو محفوظ کرنے کا ایک روایتی طریقہ ہے اور کئی چینی خاندان نمک لگانے کے لیے بعد گوشت کو دھوپ میں تار پر لٹکادیتے ہیں۔یہ چکن ، مچھلی اور بڑا گوشت ہے جو روایتی کھانوں کیلئے تار پرلٹکایاگیا ہے ۔ 

بعض رپورٹس کے مطابق شکایت کنندہ کچھ وقت کیلئے اپنے دعوے پر بضد رہا اور دعویٰ کیا کہ متعلقہ ٹیم کے چھاپے سے قبل ہی چمگادڑ کا گوشت غائب کردیا گیا تھا لیکن بعد میں معذرت کی اور لکھا کہ وہاں کوئی چمگادڑ نہیں تھے اورنہ ہی میں پڑوسی ہوں، اس فیملی کے پڑوسیوں نے شکایت کی تھی اور یہ جان کرخوشی ہوئی کہ کوئی چمگادڑ نہیں بھون رہا۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -ڈیلی بائیٹس -