جانوں جرمن اور جوڈیشل کمیشن

جانوں جرمن اور جوڈیشل کمیشن
جانوں جرمن اور جوڈیشل کمیشن

  

یہ 1980ءکے وسط کی بات ہے جب پی ٹی وی ایک ڈرامہ سیریل ’چھوٹی سی دنیا‘ٹیلی کاسٹ کیا کرتا جو کہ اندرون سندھ کے ایک گاﺅں کے گرد گھومتا ہے۔اس ڈرامے میں ایک کردار مراد علی خان کا تھا جو اسی گاﺅں کا رہائشی ہوتا ہے اور ولائیت(برطانیہ)جاتا ہے جہاں وہ کچھ عرصہ رہنے کے بعد واپس آتا ہے۔اب اسکی شہرت گاﺅں میں ایک اچھی انگریزی بولنے والے کے بن چکی ہوتی ہے ۔اس دوران ایک اور کردار ’جانوں جرمن ‘بھی ظاہر ہوتا ہے جس کے بارے میں گاﺅں والوں کا خیال ہوتا ہے کہ وہ بھی انگریزی بولنے میں مہارت رکھتا ہے بلکہ وہ مراد علی خان کو شکست بھی دے سکتا ہے۔اس بات کو دیکھتے ہوئے دونوں کا مقابلہ کروا دیا جاتا ہے۔

گزشتہ دنوں اس ڈرامے کا کلپ دیکھنے کو مل گیاتو نہ جانے کیوں مجھے جانوں جرمن اور مراد علی خان کے درمیان ہونے والے مقابلے کودیکھ کر تحریک انصاف ،نواز لیگ اور جوڈیشل کمیشن کی یاد آگئی۔جانوں جرمن اور مراد علی خان کے درمیان ’انگریزی بولی کے مقابلے ‘ کے لئے ایک’جج صاحب‘ بھی موجود ہوتے ہیں جو خود انگریزی سے مکمل نا بلدہوتے ہیں لیکن پھر بھی انہیں بزرگ اور گاﺅں کا بڑاہونے کی وجہ سے فیصلے کا اختیار دے دیا جاتا ہے۔

مجھے ایسا لگا کہ یہ ڈرامہ لکھنے والوں نے ہمارے ملک کے آنے والے حالات کااندازہ لگا لیا تھا اور انہوں نے 30سال قبل ہی موجودہ حالات کی منظر کشی کر ڈالی تھی۔

خیر مقابلے کی طرف چلتے ہیں جس کا آغاز ہوتا ہے اور ایک اندھے کو بھی یہ یقین ہوجاتا ہے کہ ’جانوں جرمن‘انگریزی سے بالکل ناواقف ہے اور اس نے گاﺅں والوں کو انگریزی گنتی سنا کر بے وقوف بنایا ہوا ہے اور ان پر اپنی انگریزی کی دھاک بیٹھا رکھی ہے۔چونکہ گاﺅں میں ’جج صاحب‘سمیت کوئی بھی انگریزی سے واقف نہیں لہذا ’جانوں جرمن ‘لوگوں کو بے وقوف بنانا جاری رکھتا ہے۔

بالکل جوڈیشل کمیشن کی کاروائی کی طرح اس مقابلے میں بھی کئی اتار چڑھاﺅ آتے ہیں اور یوںلگتا ہے کہ شاید مراد علی خان اپنی اچھی انگریزی کی وجہ سے یہ مقابلہ جیت سکتا ہے۔ ہر اس انسان کوجوانگریزی سے ہلکا سا بھی واقف ہوکو یہ یقین ہوچکاہے کہ ’جانوں جرمن‘ گاﺅں والوں کو بے وقوف بنا رہا ہے جبکہ مراد علی خان انگریزی زبان میں جواب دے رہا ہے ۔چونکہ ’جج صاحب‘بھی اس چیز سے بالکل بھی واقف نہیں جس کے لئے انہیں فیصلہ دینا ہے لیکن پھر بھی اپنا بھرم قائم رکھنے کے لئے وہ بات پر بات کہہ رہے ہیں کہ فیصلہ میں نے دینا ہے لہذا باقی لوگ چپ کرجائیں۔مقابلہ اختتا م کوپہنچتا ہے۔۔۔’جانوں جرمن‘ اہل عقل کامذاق اڑاتے ہوئے ’جج صاحب‘ کی جانب سے فاتح قرار پاتا ہے جبکہ مراد علی شاہ اپنا سا منہ لے کر گھر کوواپس آتا ہے۔

آپ بھی ذیل میں دیا گیا ڈرامے کا کلپ دیکھیں جس میں ’جج صاحب‘ تمام کاروائی سننے کے بعد آخر میں جانوں جرمن کو فاتح قرار دے رہے ہیں۔

janu german vs murad ali by dailypakistan

مزید :

بلاگ -