ناقص منصوبوں پر قومی دولت ضائع کرنا بھی کرپشن ہے: طاہر القادری

ناقص منصوبوں پر قومی دولت ضائع کرنا بھی کرپشن ہے: طاہر القادری

لاہور(این این آئی) پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے کہا ہے کہ بھاری کمشن اور کک بیکس کیلئے اورنج منصوبوں کی بجائے جدید انفراسٹرکچر کی تعمیر پر توجہ دی جاتی تو آج کروڑوں پاکستانیوں کو عالمی معیار کی سفری سہولتیں میسر ہوتیں،ناقص منصوبوں پر قومی دولت ضائع کرنا بھی کرپشن ہے،کامیابی کے ساتھ ذاتی کاروبار چلانے والوں نے پی آئی اے،ریلوے کو تباہ کر دیا،اورنج ٹرین پر خرچ ہونیوالی رقم سے پنجاب میں 35ہزار کلو میٹر فارم ٹو مارکیٹ سڑکیں تعمیر ہو سکتی تھیں اور زرعی مارکیٹنگ کے شعبے میں انقلاب آ سکتا تھا ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز برلن سے فرینکفرٹ بذریعہ ٹرین سفر کرتے ہوئے یورپی تنظیمی عہدیداروں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا کہ پی آئی اے اور ریلوے جو آج بدترین خسارے کا شکار ہیں یہی دو ادارے حکمرانوں کی کرپشن سے محفوظ رہتے تو یہ پورے پاکستان کو چلا سکتے تھے۔اورنج ٹرین ،سپیڈو اور میٹرو بسوں کا بجٹ ریلوے کو پاؤں پر کھڑا کرنے کیلئے استعمال کیا جاتا تو آج پاکستان کے کروڑوں عوام بین الاقوامی معیار کی سفری سہولیات سے لطف اندوز ہو رہے ہوتے۔ سربراہ عوامی تحریک نے برلن میں انسان کی اخلاقی و روحانی ترقی کے موضوع پر ایک بہت بڑی کانفرنس سے خطاب کیا،کانفرنس میں تحریک منہاج القرآن کے عہدیداروں،کارکنان کے ساتھ جرمنی کی ممتاز کاروباری و دیگر شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والی شخصیات نے شرکت کی۔

طاہرالقادری

مزید : صفحہ آخر