چارسدہ ،رہزنوں نے ماموں بھانجے کو موت کے گھاٹ اتار دیا

چارسدہ ،رہزنوں نے ماموں بھانجے کو موت کے گھاٹ اتار دیا

چارسدہ (بیورو رپورٹ)کلیاس روڈ پر رہزنی کی خونی واردات ۔ دیدہ دلیر رہزنوں نے ماموں بھانجے کو موٹر سائیکل سے اتار کر پھانسی کا پھندا لگایا اور دونوں کے ہاتھ باندھ کر اندھا دھند فائرنگ کرکے قتل کر دیا ۔ ملزمان مقتولین کی موٹر سائیکل ، نقدی اور موبائل فون بھی ساتھ لے گئے ۔ایک مقتول کی اگلے ہفتے شادی طے تھی۔ تفصیلات کے مطابق تھانہ سرڈھیری کے حدود سپین اراب کے قریب مسلح رہزنوں نے ناکہ لگا کر موٹر سائیکل پر شاہ ڈھند سے کلیاس جانیوالے ماموں سلمان ولد سراج اور بھانجے کامران ولد کریم کو زبر دستی روک کر ان کے ہاتھ باندھے اور پھند ا لگا نے کے بعد اندھادھند فائرنگ کرکے دونوں کو قتل کر دیا ۔ واقعہ کے بعد ملزمان مقتولین کی موٹر سائیکل ، نقدی اور موبائل فون ساتھ لے گئے ۔ واقعہ کے بعد پولیس نے نعشوں کو ہسپتال منتقل کرکے پو سٹمارٹم اور قانونی کاروائی کے بعد ورثاء کے حوالے کر دی ۔ پولیس نے مقتول کے بھائی وارث خان ولد کریم کی رپورٹ پر نامعلوم ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی ۔ مقتول کے بھائی وارث خان نے ہسپتال میں میڈیا سے بات چیت کر تے ہوئے کہا کہ ان کے مقتول بھائی کامران کی شادی اگلے ہفتے طے تھی مگر ظالموں نے ہماری خوشیاں چھین لی ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر