2خواتین سمیت 7افراد حادثات کی نذر ، سیلفی لیتے نوجوان کھائی میں گر کر چل بسا

2خواتین سمیت 7افراد حادثات کی نذر ، سیلفی لیتے نوجوان کھائی میں گر کر چل بسا

ڈیرہ غازیخان ‘ راجن پور ‘ ترنڈہ محمد پناہ ‘ چوک اعظم ‘ جتوئی ‘ شادن لُنڈ ‘ وہاڑی ( نمائندگان) مختلف حادثات و واقعات میں 2 خواتین سمیت 8 افراد زندگی کی بازی ہار گئے‘ اس سلسلے میں ڈیرہ غازیخان سے سٹی رپورٹر ‘ نمائندہ خصوصی کے مطابق کوئیٹہ روڈ راکھی کاج کے قریب کوہلو جانے والی مسافر ھائی ایس ویگن سامنے سے آنے والے ٹرک سے ٹکرا گئی جس کے نتیجہ میں ویگن میں موجود ایک ھی خاندان کے چار افراد ریحان، علی محمد، دو بچے سفیر اور نازی بی بی(بقیہ نمبر29صفحہ12پر )

شدید زخمی ھو گئے جبکہ خاتون بختو مائی اور دریان خان موقع پر جاں بحق ھو گئے ریسکیو ٹیم نے جائے حادثے پر پہنچ کر زخمیوں کوطبی امداد فہراھم کرنے کے بعد ٹیچنگ ہسپتال کے ٹراما سنٹر منتقل کر دیا بعد ازاں ڈپٹی کمشنر علی اکبر بھٹی نے ٹیچنگ ہسپتال کے ٹراما سنٹر میں زخمی ہونے والے افراد کی آمد کی اطلاع پر پہنچے اور زخمیوں کے علاج معالجہ کے حوالے سے ضروری ہدایات جاری کیں . بعد ازاں ڈپٹی کمشنر ڈیرہ غازیخان علی اکبر بھٹی ٹرک اور ویگن کے تصادم میں زخمی ہونے والے افراد کی آمد کی اطلاع پر ٹیچنگ ہسپتال ڈیرہ غازیخان پہنچے اور زخمیوں کے علاج معالجہ کے حوالے سے ضروری ہدایات جاری کیں .ڈپٹی کمشنر کو بتایاگیاکہ سات بجکر 34منٹ پر ریسکیو کو اطلاع ملی کہ راکھی گاج کے مقام پر ٹرک اور ویگن کے تصادم میں سات افراد زخمی ہو گئے. ریسکیورز موقع پر پہنچے اور انہوں نے پانچ زخمیوں کو ٹیچنگ ہسپتال منتقل کیا جبکہ دو زِخمی پہلے ہی ہسپتال کیلئے روانہ ہو گئے تھے . ڈپٹی کمشنر کو بتایا گیا کہ ٹھٹھہ سندھ سے تعلق رکھنے والے افراد کوہلوبلوچستان میں اپنی بیٹی کو ملنے کیلئے جا رہے تھے کہ تیز رفتاری کے باعث حادثہ پیش آگیا . ڈپٹی کمشنر ہر زخمی کے بیڈ پر گئے . عیادت کے ساتھ ساتھ فراہم طبی سہولیات کا بھی جائزہ لیا اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر احمد فراز اعوان ، ایم ایس ایڈمن ڈاکٹر گل حسن شاہ ، ڈاکٹر احمد او ردیگر موجو دتھے . دریں اثنا ڈپٹی کمشنر نے ہسپتال کے مختلف شعبوں کا دورہ کیا . صفائی ، ڈاکٹرز او ر پیرا میڈیکل سٹاف کی حاضری اور دیگر انتظامات چیک کیے . راجن پور سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق لاہور میں زیرتعلیم انجیئنرنگ کاطالب علم علی طارق اپنے بھائی کے ہمراہ رشتے داروں سے ملنے حاجی پور آیا جہاں وہ اپنے رشتے دار لڑکوں کے ہمراہ کوہ سلیمان کے پہاڑی سلسلہ ’’ماڑی ‘‘ کی سیر کوپہنچا اس دوران نوجوان نے سیلفی بنانا چاہی مگر چٹان سے لڑھک کر کھائی میں موجود تالاب میں جاگرا ،نوجوان کے بھائی اور رشتہ دارلڑکوں کے شور پر مقامی افراد موقع پر پہنچ گئے ادھر راجن پور سے ریسکیو ٹیم بھی روانہ ہوگئی آٹھ گھنٹے کی طویل جدوجہد کے بعدنوجوان کی لاش تالاب سے نکال لی گئی لاش کوفاضل پور دیہی مرکز صحت منتقل کردیا گیا لاش کے پہنچنے پر گھر میں کہرام مچ گیا ۔ ترنڈہ محمد پناہ سے نمائندہ خصوصی کے مطابق موضع فاضل پور کے تیس سالہ نوجوان برکت علی چانڈیہ منچن برانچ جن پور میں نہا تے ہوئے ڈوب گیا واقعہ کی اطلاع ملتے ہی ا ہل علاقہ نے ریسکیو 1122 کی ٹیم کو آگاہ کیا ریسکیو 1122 کے غوطہ خوروں نے چار گھنٹے سے لعش کی تلاش شروع کر دی ہے آخر ی اطلاع تک لعش نہ مل سکی ہے نوجوان کے ڈوبنے کی اطلاع ملتے ہی علاقہ میں کہرام مچ گیا ۔ چوک اعظم سے نمائندہ خصوصی کے مطابق چوک اعظم کے نواحی گاؤں 318/TDA میں راہگیر غلام مصطفی جو کہ وہاں سے گزر رہاتھا کہ بپھرے ہوئے بیل نے ٹکر ماردی اوراپنے سینگوں سے شدید زخمی کردیازخمی نوجوان کو فوری طور پر ہسپتال لایا گیا لیکن وہ جانبر نہ ہو سکا۔ جتوئی سے نامہ نگار کے مطابق تھانہ جتوئی کی حدود میں حادثہ پیش آئے کیری میں 3 افراد سوا ر تھے جو شہرسلطان کا نواحی علاقہ مسوشاہ کے رہائشی تھا جو علی پور آرہے تھے حادثہ میں 25 سالہ خاتون موقع پر جاں بحق اور دو افراد زخمی ہو گئے اور زخمیوں اور جاں بحق ہونے والی خاتون کو علی پور ہسپتال میں منتقل کردیا۔ شادن لُنڈ سے نامہ نگار کے مطابق قصبہ کا لا کا رہا ئشی جا وید حسین دا یا اپنے دو ستو ں کے ہمرا ہ سعو دی عر ب میں حج کی سعا دت حا صل کر نے کے لئے گیا ہوا تھا کہ کا ر پر سوا ر مکہ سے بدر کیطر ف زیا رت کے لئے جا رہے تھے کہ سا منے سے آ نے وا لی کا ر نے ٹکر ما ر دی جس کے نتیجے میں جا وید حسین دا یا مو قع پر یلا ک ہو گیا جبکہ اس کا دو ست محمد اقبا ل ٹھینگا نی شد ید زخمی ہو گیا تھا ۔ وہاڑی سے بیورو رپورٹ ‘ نمائندہ خصوصی کے مطابق گزشتہ روزخانیوال روڈ کچا کھوہ کے نز یک ویگن اور ٹرالہ کے المناک حادثہ میں نواحی گاؤں سات ڈبلیوبی کے رہائشی رانا محمد سلیم کا جواں سالہ بیٹا رانا عمیر سلیم جاں بحق ہو گیا تھا مرحوم کی نعش جب اچانک گھرپہنچی تو علاقہ میں کہرام مچ گیا، پورا علاقہ سوگوار ہو گیا ہر آنکھ اشکبار ہو گئی ، بعد ازاں رانا عمیر سلیم کو سینکڑوں سوگواروں کی موجودگی میں سپرد خاک کردیا گیا۔

حادثات

مزید : ملتان صفحہ آخر