ازدواجی فرائض کی ادائیگی کے لئے دن کا یہ وقت سب سے بہترین ہوتا ہے، سائنسدانوں نے ایسا انکشاف کردیا جو کسی کو معلوم نہ تھا

ازدواجی فرائض کی ادائیگی کے لئے دن کا یہ وقت سب سے بہترین ہوتا ہے، سائنسدانوں ...
ازدواجی فرائض کی ادائیگی کے لئے دن کا یہ وقت سب سے بہترین ہوتا ہے، سائنسدانوں نے ایسا انکشاف کردیا جو کسی کو معلوم نہ تھا

  

برمنگھم(نیوز ڈیسک)دن کے مختلف اوقات میں ہماری جسمانی و ذہنی کیفیت ایک سی نہیں ہوتی۔ کسی وقت ہم بہت سستی و بیزاری محسوس کرتے ہیں تو کسی وقت بہت توانائی و مسرت محسوس ہوتی ہے۔ ایسا کیوں ہوتا ہے، اور اس کا ہماری زندگی کے اہم ترین روزمرہ امور سے کیا تعلق بنتا ہے، سائنسدانوں نے اس موضوع پر ایک دلچسپ تحقیق کی ہے۔ اور یہ تحقیق محض دلچسپ ہی نہیں بلکہ اس میں کچھ بہت کام کی باتیں بھی سامنے آئی ہیں۔

میل آن لائن کے مطابق سائنسدانوں نے سوشل میڈیا صارفین پر کی جانے والی ایک جامع تحقیق میں دریافت کیا ہے کہ بنیادی طور پر ہمارے جسم میں پیدا ہونے والے دو ہارمون دن کے مختلف اوقات میں ہمارے مزاج کے اتار چڑھاﺅ کے ذمہ دار ہیں۔ ان میں سے ایک ہارمون ”کورٹیسول“ ہے جسے سٹریس ہارمون، یعنی ذہنی دباﺅ پیدا کرنے والا ہارمون، بھی کہتے ہیں جبکہ دوسرا خوشی کا ہارمون ”سیروٹنن“ ہے۔ ان کے علاوہ بلڈ شوگر لیول ، غذا اور دیگر ہارمونز کا اخراج بھی ہمارے موڈ کو متاثر کرتا ہے۔ تحقیق کار ڈینیل پنک کہتے ہیں کہ یہ ہارمون مختلف اوقات میں مختلف مقدار میں خارج ہوتے ہیں۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ ہماری جسمانی و ذہنی کیفیات دن کے مختلف اوقات میں بدلتی رہتی ہیں اور اگر ہم اپنے روزمرہ کاموں کو اس اتار چڑھاﺅ کو مدنظر رکھتے ہوئے کریں تو یہ ہمارے لئے بہت ہی اچھا ثابت ہوتا ہے۔

مثال کے طور پر اگر آپ صبح 6بجے تک اُٹھ جائیں تو جسم میں ہارمون کورٹیسول بہت زیادہ جمع نہیں ہوتا اور آپ ہشاش بشاش ہوتے ہیں لیکن اگر آپ دیر تک سوتے رہیں گے تو اس ہارمون کی زیادہ افزائش کی وجہ سے آپ کا موڈ سارا دن آف رہے گا۔ خواتین کی بات کی جائے تو 6 سے 8 بجے کے درمیان ان کے جسم میں جنسی ہارمون کی افزائش بھرپور طور پر ہورہی ہوتی ہے اور اس وقت کے دوران ان کا موڈ بھی خوشگوار ہوتا ہے۔

دن 10بجے تک نہ صرف ہارمون کورٹیسول کے اثرات ختم ہوچکے ہوتے ہیں بلکہ ہارمون سیروٹنن اپنا اثر دکھانا شروع کر دیتا ہے اور سورج کی روشنی کے بھی ہمارے موڈ پر اچھے اثرات ظاہر ہو رہے ہوتے ہیں۔ یہ وہ وقت ہے جب ہماری توانائی اعلیٰ ترین سطح پر ہوتی ہے اور اسی لئے تحقیق کاروں نے دن 10 بجے کو ازدواجی فرائض کی ادائیگی کیلئے بہترین وقت قرار دیا ہے۔ یہ الگ بات کہ بیش تر لوگوں کے لئے غالباً چھٹی کے دن کے سوا دن 10 بجے کے وقت سے مستفید ہونا ممکن نہیں ہو گا، بہرحال سائنس کی نظر میں موزوں ترین وقت یہی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس