عمر اکمل کی سزا میں ڈیڑھ سال کی کمی، کرکٹر کا دوبارہ اپیل کا فیصلہ

  عمر اکمل کی سزا میں ڈیڑھ سال کی کمی، کرکٹر کا دوبارہ اپیل کا فیصلہ

  

لاہور(سپورٹس رپورٹر)قومی کرکٹر عمراکمل کی تین سالہ پابندی کیخلاف اپیل کا فیصلہ سنا دیا گیا جس کے تحت ان کی سزا میں ڈیڑھ سال کی کمی کی گئی ہے،فیصلے کے مطابق سزا کا اطلاق عمر اکمل کی عبوری معطلی کے روز سے ہوگا،جوکہ 20فروری 2020 ہے، آزاد ایڈجیوڈیکٹر جسٹس ریٹائرڈ فقیر محمد کھوکھر نے عمر اکمل کی اپیل پر 13جولائی کی واحد سماعت میں فیصلہ محفوظ کیا تھا جس کا فیصلہ بدھ کو سنایا گیا۔ترجمان پی سی بی کے مطابق سپریم کورٹ کے سابق جج جسٹس ریٹائرڈ فقیر محمد کھوکھرنے بطور انڈیپینڈنٹ ایڈجیوڈیکٹرعمر اکمل کی اپیل پر کیس کا محفوظ کیا گیا فیصلہ سنادیا ہے۔انڈیپینڈنٹ ایڈجیوڈیکٹرنے 29 جولائی 2020 کو جاری کیے گئے اپنے فیصلہ میں لکھا ہے کہ اپنے انٹرویو اور2 مختلف اوقات میں 2 مختلف افراد کی جانب سے فکسنگ سے متعلق رابطوں کے حوالے سے شوکاز نوٹس کے جواب میں اپیل کنندہ کی خوداعترافی کے بعد کسی شک کی گنجائش نہیں رہ جاتی۔دوسری جانب قومی کرکٹر عمراکمل نے آزاد جیو ڈیکٹر کی جانب سے ڈیڑھ سال کی پابندی کی سزا کے خلاف دوبارہ اپیل کرنے کا اعلان کیا کہا کہ ڈیڑھ سال کی سزا سے مطمیئن نہیں، وکلا سے مشاورت کے بعد پھر اپیل کریں گے۔

کیوں کہ مجھ سے پہلے بھی بہت سے کھلاڑیوں نے غلطیاں کی ہیں لیکن اتنی سخت سزا کسی کو نہیں دی گئی۔عمر اکمل کے وکیل طیب رضا نے کہا کہ آزاد ایڈ جیوڈیکٹر صاحب کے شکر گزار ہیں کہ انہوں نے ہمارا مقف تسلیم کیا۔وکیل عمر اکمل کا کہنا تھا کہ سزا تین سے ڈیڑھ سال کر دی گئی لیکن جو امید کر رہے تھے، یہ ایسا فیصلہ نہیں ہے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -