تعمیراتی سیکٹر کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرینگے، میاں اسلم اقبال

  تعمیراتی سیکٹر کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرینگے، میاں اسلم اقبال

  

لاہور (لیڈی رپورٹر)صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال کی زیر صدارت سول سیکرٹریٹ میں تعمیراتی سیکٹر سے وابستہ سٹیک ہولڈر زکا مشترکہ اجلاس منعقد ہوا۔ جس میں ترقیاتی منصوبوں میں متعلقہ محکموں کی جانب سے قوائدوضوابط پر عملدرآمد کے امور پر بات چیت کی گئی۔ تعمیراتی سیکٹر کے نمائندوں نے مٹیریل، لیبر ریٹ مارکیٹ کے مطابق کرنے،پرفارمنس گارنٹی، منصوبوں کی فنڈنگ، کنسلٹنٹس کو ادائیگی، پرائیسزویری ایشن، کرش ریٹ کی ادائیگی اور دیگر مسائل سے آگاہ کیا۔ تعمیراتی سیکٹر کے وفدنے میاں اسلم اقبال سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آپ صنعت کاروں، تاجروں اور کاروباری طبقے کی آواز ہیں، آپ سے مل کر اپنے مسائل کے حل ہو نیکا حوصلہ ملا ہے۔صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان نے تعمیراتی سیکٹر کے لئے تاریخی پیکج دیا ہے، تعمیراتی سیکٹر میں سرمایہ کاری بڑھنے سے لاکھوں افراد کے لئے روز گار کے مواقع پیدا ہوں گے۔اس سیکٹر سے وابستہ 40چھوٹی صنعتیں بھی فروغ پائیں گی۔ انہوں نے کہا کہ تعمیراتی سیکٹر کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کئے جائیں گے۔کنسٹرکٹرایسوی ایشن کے اٹھائے گئے امور متعلقہ ادارے کی مشاورت سے طے کئے جائیں گے۔صوبائی وزیر نے چیف انجینئر سے استفسارکیا کہ منصوبوں پر کنسلٹنٹ رکھے جاتے ہیں تو متعلقہ محکموں کے انجینئرز کیا کرتے ہیں۔ میاں اسلم اقبال نے کہا کہ پنجاب حکومت نے گزشتہ دو سالوں میں ریکارڈ ترقیاتی کام کرائے ہیں۔ تعمیراتی سیکٹر کے منصوبوں کو تیز رفتاری سے مکمل کیا جائے گا۔

اجلاس میں منصوبے پر کام کی تکمیلِ کی مناسبت سے پرفارمنس گارنٹی کی ادائیگی کی تجویز پر اتفاق کیا گیا۔ کنسٹرکٹرایسوی ایشن کے وفد میں ضمیر ڈیولپرز کے اکبر شیخ، یونی بلڈرزکے حبیب کنول اور دیگر شامل تھے۔ایڈیشنل سیکرٹری صنعت و تجارت،چیئرمین پی آر اے اورمتعلقہ محکموں کے افسران نے اجلاس میں شرکت کی۔

مزید :

کامرس -